جدید آلات سے لیس نئی بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں سکواڈ کے حوالے

جدید آلات سے لیس نئی بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں سکواڈ کے حوالے

  

 لاہور(جنرل رپورٹر)بزدار حکومت کا عوام کے جان و مال کے تحفظ اور تخریبی سرگرمیوں کے بروقت سد باب کیلئے اہم اقدام، جدید ترین آلات سے لیس نئی بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں بم ڈسپوزل سکواڈ کو مل گئیں -وزیر اعلی آفس میں نئی بم ڈسپوزل گاڑیاں پنجاب کے 8 اضلاع کے حوالے کرنے کی تقریب میں وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے نئی بم ڈسپوزل گاڑیوں کامعائنہ کیااور گاڑیوں میں نصب جدید آلات بھی دیکھے-وزیر اعلی عثمان بزدار نے بم ڈسپوزل گاڑیاں متعلقہ اضلاع کے بم ڈسپوزل کمانڈرکے حوالے کیں -نئی گاڑیاں بم ڈسپوزل سوٹ، مائن ڈیٹیکٹرز،ڈسرپٹرزاور دیگر جدید آلات سے لیس ہیں - وزیر اعلی عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جدید سہولتوں اور آلات سے لیس گاڑیوں سے بم ڈسپوزل سکواڈ کی صلاحیتو ں میں مزید اضافہ ہو گا -نئی گاڑیاں ملنے سے متعلقہ اضلاع میں بم ڈسپوزل یونٹ کی کارکردگی بہتر ہو گی- عوام کے جان ومال کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے گا- وزیر اعلی نے کہا کہ پنجاب کے ہرضلع کو بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں دیں گے -دہشتگردی کیخلاف جنگ میں بم ڈسپوزل یونٹ کے عملے کی خدمات لائق تحسین ہیں -وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے سول ڈیفنس پنجاب کی کارکردگی کو سراہا - وزیر اعلیٰ کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ پنجاب کے 12 اضلاع میں بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں پہلے سے موجود ہیں اورمزید 8 اضلاع کو نئی بم ڈسپوزل رسپانس گاڑیاں ملنے سے بم ڈسپوزل یونٹ کا دائرہ کار 20 اضلاع تک بڑھا دیا گیا ہے -صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت،چیف سیکرٹری،ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ،سیکرٹری انفارمیشن اورمتعلقہ حکام نے تقریب میں شرکت کی- سردار عثمان بزدارنے کہا ہے کہ اپوزیشن ملک میں افراتفری پھیلانے کی کوشش کررہی ہے۔کرپشن میں ملوث ٹولہ لوٹی گئی دولت کا تحفظ چاہتا ہے۔وزیر اعلی نے کہا کہ یہ وہ شکست خوردہ عناصر ہیں جنہیں عوام نے یکسر مسترد کیا۔ قوم باشعور ہے،یہ عناصر عوام کو گمراہ نہیں کرسکتے۔ وزیر اعلی عثمان بزدار نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں فیصلے ملک و قوم کے مفاد میں کئے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کورونا کی دوسری لہر کے خدشے کے باوجودعوامی اجتماع کرنا اپوزیشن جماعتوں کی بے حسی ہے۔اپوزیشن رہنماؤں نے عوام کی زندگیوں کی پرواتک نہیں کی۔ان عناصر نے صرف اپنے ذاتی ایجنڈے کو مقدم رکھا۔

عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -