زرعی قرضہ: کسانوں سے فراڈ کا انکشاف

 زرعی قرضہ: کسانوں سے فراڈ کا انکشاف

  

مظفرگڑھ(نامہ نگار) خان گڑھ میں کسانوں سے فراڈ کا انکشاف ہوا ہے، ایک‘ایک کسان کے نام پر ایک زرعی لون کی بجائے 5 کیس منظور کر کے رقوم نکلوائی جانے لگی، زرعی (بقیہ نمبر34صفحہ 6پر)

قرضہ کی ادائیگی کے نوٹسز ملنے پر متاثرین سراپا احتجاج بن گئے، تفصیل کے مطابق کسانوں سے کاغذات پر انگھوٹھے لگوا کر ان کے ناموں سے ایک کیس کے بجائے پانچ پانچ کیس کر کے لاکھوں روپے کی رقم ہڑپ کی جارہی ہے خان گڑھ کے نواحی موضع سلیمان پور کے کاشتکار ملک سعید اختر سندیلہ سے افسران نے سات لاکھ روپے کی ادائیگی کا تقاضہ کیا تو فراڈ کا انکشاف ہوا ملک سعید اختر نے میڈیا کو بتایا کہ خان گڑھ میں تعینات افسر معین خان بھٹہ سے چار لاکھ 22 ہزار پانچ سو کا قرضہ لیا اس قرضے کی سود سمیت رقم آٹھ لاکھ دو ہزار پانچ سو روپے ادائیگی کر دی گئی، اب افسران مزید سات لاکھ روپے کا تقاضہ کر رہے ہیں،ملک سعید اختر کا کہنا ہے کہ سابقہ افسران نے ایک ہی کسان کے نام پر کھاد بیج کا پانچ مرتبہ قرضہ نکلوا کر پیسے ہڑپ کر چکے ہیں متاثرہ کے مطابق حکام نہ تو ریکارڈ چیک کرا رہے ہیں اور نہ ہی تفصیلی اسٹیٹمنٹ دے رہے ہیں متاثرہ نے اعلی حکام سے انصاف دلانے کی اپیل کی ہے۔

انکشاف

مزید :

ملتان صفحہ آخر -