"نانی نانا کا نام ساتھ نہیں لگاتی، بچہ والد کا نام ساتھ نہیں لگاتا اور ایک مولانا ہے جس کا پتا ہی نہیں چلتا کہ آرہے ہیں یا جا رہے ہیں"

"نانی نانا کا نام ساتھ نہیں لگاتی، بچہ والد کا نام ساتھ نہیں لگاتا اور ایک ...

  

کراچی (آئی این پی)وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے کہا ہے کہ نانی کا مسئلہ بڑا دلچسپ ہے، نانی نانا کا نام ساتھ نہیں لگاتی، بچہ والد کا نام ساتھ نہیں لگاتا اور ایک مولانا ہے جس کا پتا ہی نہیں چلتا کہ مولانا آرہے ہیں یا جا رہے ہیں،سب میں ایک بات مشترک ہے سب  کے  پاس چوری کا مال ہے، سارے بچے والدین کی چوری بچا رہے ہیں اور مولانا اپنی چوری بچا رہے ہیں، نواز شریف بھی نااہل ہیں، ان سے سوال پوچھو تو کہتے ہیں کہ جمہوریت کے خلاف سازش ہے، میاں صاحب جمہوریت نام ہی احتساب کا ہے، جو نواز شریف نے پنجاب میں کیا وہی پیپلز پارٹی نے سندھ میں کیا،    کرپشن بچاؤ سیاست کا وقت گزر چکا ، عمران خان نے  نئی بال  لے لی ہے  اور وکٹ پر بھی باؤنس آگیا ہے،یہ سرکاری ملازموں کو لا کر جلسہ کرنا چاہتے ہیں، جو بھی کراچی میں آئے گا خوش آمدید کہتے ہیں جو کرنا ہے کریں۔

وفاقی وزیر منصوبہ  بندی  اسد عمر کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے کہا کہ نانی کا مسئلہ بڑا دلچسپ ہے، نانی نانا کا نام ساتھ نہیں لگاتی، بچہ والد کا نام ساتھ نہیں لگاتا اور ایک "مولانا" ہے ،جس کا پتا ہی نہیں چلتا کہ مولانا آرہے ہیں یا جا رہے ہیں؟ان سب میں ایک بات مشترک ہے، سب کا پاس چوری کا مال ہے،سارے بچے والدین کی چوری بچا رہے ہیں اور مولانا اپنی چوری بچا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بلاول صاحب آپ لاہور میٹرو بس کی تعریف کرتے ہیں، شہباز شریف کی پارٹی نے 35 سال حکومت کی،آپ کے بھی کراچی میں تیس  سال بنتے  ہیں  تو کراچی میں بس بھی نا چلا سکے،پیپلز پارٹی نے سندھ کے لئے کیا کیا،صحب، پانی کا مسئلہ یہاں پر ہے،سب سے زیادہ غریب سندھ میں ہیں لیکن سب سے زیادہ امیر سیاستدان سندھ میں ہیں،عزیر بلوچ اور اومنی گروپ کی جے آئی ٹی بھی آپ کے ساتھ لنک کرتی ہے،بلاول نے کبھی کوئی کام نہیں کیا نا ہی "نانی" نے کوئی کام کیا ہے ،کوئی حق حلال کی کمائی نہیں کی اور چلے ہیں ملک کو سدھارنے، جنہوں نے ملک بگاڑا وہی ملک سدھارنے چلے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بے نظیر شہید بہادر خاتون تھیں لیکن مشرف کے مارشل لاء کو اُنہوں نے خوش آمدید کیا، آپ کے نانا ذوالفقار علی بھٹو بھی بڑے مشہور سیاستدان تھے،شہیدوں کے نام پر آپ سیاست کر رہے ہیں،اُنہوں نے بھی ڈکٹیٹر کا وزیر بن کر سیاست کی،جنہوں نے دودھ پلا پلا کر بڑا کیا آج آپ انہی پر الزام لگا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف بھی نااہل ہیں،اِن سے سوال پوچھو تو کہتے ہیں کہ جمہوریت کے خلاف سازش ہے،میاں صاحب جمہوریت نام ہی احتساب کا ہے،جو نواز شریف نے پنجاب میں کیا وہی پیپلز پارٹی نے سندھ میں کیا،کرپشن بچاؤ سیاست کا وقت گزر چکا،عمران خان نے نیا بال لے لیا ہے اور وکٹ پر بھی باؤنس آگیا ہے،یہ سرکاری ملازموں کو لا کر جلسہ کرنا چاہتے ہیں،جو بھی کراچی میں آئے گا خوش آمدید کہتے ہیں جو کرنا ہے کریں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -