"اگر امریکہ پاکستان کی طرح کورونا سے نمٹتا تو 10 ہزار ارب ڈالر بچا سکتے تھے" آئی ایم ایف کے سابق چیف اکانومسٹ نے امریکی حکومت کو مشورہ دے دیا

"اگر امریکہ پاکستان کی طرح کورونا سے نمٹتا تو 10 ہزار ارب ڈالر بچا سکتے تھے" ...
کیپشن:    سورس:   Facebook

  

واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن) عالمی بینک کے سابق چیف اکانومسٹ اور اوبامہ کی اکنامک کونسل کے صدر لارنس ہینری سمرز (لیری سمرز) کی جانب سے پاکستان کی کورونا کے خلاف حکمت عملی کی تعریف کی گئی ہے۔

امریکی ٹی وی چینل سی این این کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے لیری سمرز نے کہا کہ امریکہ کی کووڈ 19  کو قابو کرنے میں ناکامی ناقابل تصور ہے، اگر امریکہ پاکستان کی طرح اس عالمی وبا سے نمٹتا تو 10 ٹریلین ڈالر (10 ہزار ارب ڈالر) کی رقم بچائی جاسکتی تھی۔

انہوں نے کہا کہ امریکہ کو ٹیسٹنگ کی رفتار کو ہنگامی طور پر بڑھانا ہوگا۔ اس وقت شرح سود صفر ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ فنڈز موجود ہیں، سب سے زیادہ خطرہ ان فنڈز کو خرچ نہ کرنے سے ہے۔

خیال رہے کہ اس سے پہلے ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن اور ورلڈ اکنامک فورم بھی پاکستان کے کرونا کے خلاف اقدامات کو دنیا کے لیے قابل تقلید قرار دے چکے ہیں۔ 

پاکستان کی سول اور عسکری قیادت نے کورونا بحران کے دوران تاریخی اقدامات سے نہ صرف قیمیتی جانوں کو بچایا بلکہ عوام کی صحت اور حفاظت کو یقینی بنایا۔ 

ایک ایسے وقت میں جب خطے اور دنیا میں اکثر ممالک کو تنقید کا سامنا ہے پاکستان کی کورونا حکمت عملی کی تعریف اس بات کا ثبوت ہے کہ پاکستانی قوم متحد ہو کر چیلنجز کو کامیابیوں میں بدل سکتی ہے۔

مزید :

Breaking News -اہم خبریں -بین الاقوامی -کورونا وائرس -