ڈاکٹر عبد القدیر خان جیسی شخصیات صدیوں بعد پیدا ہوتی ہیں: سراج الحق 

ڈاکٹر عبد القدیر خان جیسی شخصیات صدیوں بعد پیدا ہوتی ہیں: سراج الحق 

  

          تیمرگرہ (آن لائن)جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ سودی نظام نے پاکستانی معیشت کو کھوکھلاکردیا،ملک کی بقا ء اسلامی نظام سے وابستہ ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے تیمرگرہ میں فہم قرآن کلاس کے آخری روز شرکا ء سے خطاب میں کیا جس میں ہزاروں مردوخواتین نے شرکت کی،انہوں نے کہا کہ قرآنی نظام اور قرآنی تعلیمات پر عمل ہی میں دنیا و آخرت کی کامیابی ہے، مسلمان آپس کی تفرقہ بازی سے ہٹ کر جسد واحد بن جا یے تو تمام مسائل کا حل ممکن ہے،عالم اسلام آج لہو لہو ہے جس کی بنیادی وجہ مسلم حکمرانوں کی بے حسی اور آپس کی چفقلش ہے، دوسری جانب امیر سراج الحق نے کہا ہے کہ ڈاکٹر عبد القدیر خان اور محترمہ مقبول فاطمہ جیسی شخصیات صدیوں بعد پیدا ہوتی ہیں۔پاکستانی قوم اپنے ہیروز پر فخر محسوس کرتی ہے۔محسن پاکستان کی قربانیوں کی وجہ سے پاکستان ناقابل تسخیر قوت بنا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے مرکزی نائب امیر راجہ فاضل تبسم کی خوشدامن محترمہ مقبول فاطمہ کی وفات پر تعمیر منزل اسلام آباد میں تعزیت اور فاتحہ خوانی کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر مرکزی نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان میاں محمد اسلم،صدر انجمن تاجران پاکستان کاشف چوہدری،امیر جماعت اسلامی اسلام آباد نصرا للہ رندھاوا،ضیاء راجہ و دیگر موجود تھے،اس موقع پر سراج الحق نے کہاکہ دنیا بھر میں بسنے والی مظلوم و محکوم قومیں پاکستان سے امیدیں وابستہ کیے ہوئے ہے، نا اہل قیادت کی وجہ سے مہنگائی،بے روزگاری کا سیلاب امڈ آیا ہے قوم حقیقی قیادت کا انتخاب کرے تا کہ ان محسن کشوں کو عبرت کا نشان بنایا جائے۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -