روشن مستقبل کی امید لیے پاکستانی نوجوان سلوینیا کے بارڈر پر وحشیانہ تشدد سے جان کی بازی ہار گیا

روشن مستقبل کی امید لیے پاکستانی نوجوان سلوینیا کے بارڈر پر وحشیانہ تشدد سے ...
روشن مستقبل کی امید لیے پاکستانی نوجوان سلوینیا کے بارڈر پر وحشیانہ تشدد سے جان کی بازی ہار گیا

  

جہلم (ویب ڈیسک) جہلم کا رہائشی بیرون ملک میں سنہرے مستقبل کی خاطر سلوینیا کے بارڈر پر وحشیانہ تشدد سے جان کی بازی ہار گیا جس کی میت گھر پہنچنے پر کہرام مچ گیا، ایجنٹوں نے مختلف اوقات میں 40 لاکھ روپے ہتھیا لیے ، ایف آئی اے کو متعدد بار درخوست دی گئی مگر کوئی کارروائی عمل میں نہ لائی گئی۔

اس پر لواحقین نے شدید اختجاج کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کے ہماری درخواستوں کے باوجود اداروں نے کوئی کارروائی عمل میں نہ لائی اور خاموش تماشائی بنے رہے جس کی بنا پر انسانی سمگلر انتہائی متحرک ہوگئے ہیں اور ناجانے کتنے ہی گھروں کے چراغ بجھا دیے گئے اور انسانی سمگلروں کا یہ خونی کھیل بڑھتا ہی جا رہا ہے اس کی روک تھام میں کوئی بھی کردار ادا نہیں کر رہا۔

متاثرہ خاندان نے اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ اس کے ذمہ دار ایجنٹ کے خلاف سخت سے سخت قانونی کارروائی کی جائے تاکہ آئندہ ایسے واقعات نہ ہوسکیں۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -جہلم -