ایف بی آر نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ کو کتنے کروڑ کا ٹیکس بھرنے کا حکم دے دیا؟ نیا تنازعہ پیدا ہوگیا

ایف بی آر نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ کو کتنے کروڑ کا ٹیکس بھرنے کا حکم ...
ایف بی آر نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ کو کتنے کروڑ کا ٹیکس بھرنے کا حکم دے دیا؟ نیا تنازعہ پیدا ہوگیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کی جانب سے سپریم کورٹ کے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ کو ساڑھے 3 کروڑ روپے کا ٹیکس ادا کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔ قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ سرینا عیسیٰ کا کہنا ہے کہ وہ ٹیکس ٹربیونل میں اس آرڈر کو چیلنج کریں گی۔

ایف بی آر کی جانب سے 14 ستمبر کو یہ حکم جاری کیا گیا تھا جو آج (18 ستمبر کو) جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ سرینا عیسیٰ کو موصول ہوا ہے۔ اس آرڈر میں سرینا عیسیٰ سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے ذمے واجب الادا ساڑھے 3 کروڑ روپے کا ٹیکس ادا کریں۔

ایف بی آر کا حکمنامہ ملنے پر سرینا عیسیٰ نے اسے چیلنج کرنے کا اعلان کردیا اور کہا کہ ایف بی آر نے انہیں سنے بغیر غیر قانونی آرڈر پاس کیا ہے جس کو وہ ٹیکس ٹربیونل میں چیلنج کریں گی۔ آرڈر میں ان کی تنخواہ، زرعی آمدن اور کراچی میں جائیداد کی فروخت سے حاصل ہونے والی آمدن شامل نہیں ہے۔ بار بار درخواست کے باوجود ایف بی آر کی جانب سے انہیں ان کے گوشواروں کی تفصیلات نہیں دی گئیں۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -