باڑہ،غیر یقینی صورتحال کے باعث کاروبار تباہ ہورہا ہے،سید آیاز وزیر

  باڑہ،غیر یقینی صورتحال کے باعث کاروبار تباہ ہورہا ہے،سید آیاز وزیر

  

باڑہ (نمائندہ پاکستان)باڑہ بازار میں امن و امان کی غیر یقینی صورتحال کے باعث کاروبار تباہ ہو رہا ہے۔ ضلعی انتظامیہ تاجروں کو تحفظ دینے میں مکمل ناکام ہے۔ بازار کی آبادکاری میں رکاوٹیں کھڑی کرنے والے افسران کے خلاف تحریک چلائیں گے۔ ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر باڑہ کی جانب سے ضبط کیا گیا تیار فرنیچر مالکان کے حوالے کیا جائے۔ بصورت دیگر شدید احتجاج پر مجبور ہو جائیں گے۔ ان خیالات کا اظہار انجمن تاجران باڑہ کے چیئرمین سید آیاز وزیر نے باڑہ پریس کلب میں ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ انجمن تاجران باڑہ کے صدر معراج آفریدی، گل احمد، علی محمد، اخونزادہ اجمعین، زمان خان، مشرف خان، گل نبی اور وزیر خان سمیت دیگر مشران بھی موجود تھے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز نیاز مارکیٹ باڑہ میں کارپینٹر کے دوکان سے ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر باڑہ نے تیار فرنیچر ضبط کرکے اپنے ساتھ لے گیا۔ اس سے پہلے ملک کے کسی حصے میں بھی تیار فرنیچر کو ضبط نہیں کیا گیا۔ ہمارے ساتھ نا انصافی کی گئی ہے۔ دوکانداروں کو سہولیات دینے کے بجائے مشکلات پیدا کی جارہی ہے۔ ایک طرف بے روزگاری ہے تو دوسری طرف ضلعی انتظامیہ تاجروں سے روزگار چھین رہے ہیں۔ باڑہ بازار میں امن و امان کی غیر یقینی صورتحال ہے۔ گزشتہ دنوں دو تین وارداتیں ہوئی۔ جن مین تاجروں سے لاکھوں روپے چھینے گئے۔ باڑہ بازار میں سکیورٹی کیمرون کے ساتھ ساتھ تاجروں کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے متعلقہ حکام سے پرزور مطالبہ کرتے ہوئے کہا  کہ غیرقانونی طور پر ضبط کیا گیا فرنیچر جلد از جلد مالکان کے حوالے کریں بصور دیگر شدید احتجاج پر مجبور ہو جائیں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -