افغان طالبان حکومت سے شکائت

افغان طالبان حکومت سے شکائت

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


پاکستان کے دفتر خارجہ نے افغانستان کی طالبان حکومت سے کہا ہے کہ وہ اپنے ملک میں دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کو موثر بنائے۔ دفتر خارجہ میں افغان ناظم الامور کو طلب کرکے شکائت کی گئی کہ افغان سرحد سے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے دہشت گرد سرحد عبور کرکے پاکستان کی حفاظتی چوکیوں پر حملہ کرتے ہیں ان حملوں میں ہمارے متعدد فوجی جوان شہید ہو چکے ہیں۔  دفتر خارجہ کے ترجمان کے مطابق دہشت گردوں کی طرف سے سرحد عبور کرکے حملے کرنے کے حوالے سے افغان حکومت سے کئی بار شکائت کی گئی لیکن یہ حملے بند نہیں ہوئے۔ دوسری طرف طالبان حکومت کی طرف سے پاکستان کے خلاف فضائی حملوں کا الزام لگا دیا گیا اور کہا گیا ہے کہ خوست اور کنز میں حملے کئے گئے۔ پاک فوج کی طرف سے سرحدوں کی حفاظت اور دہشت گردوں کے حملوں سے تحفظ کی کارروائیوں میں شہادتیں ہو رہی ہیں۔ اس سلسلے میں یہ پہلی بار نہیں کہ طالبان حکومت سے شکائت کی گئی ہے مگر ادھر سے ابھی تک یہ کارروائیاں جاری ہیں۔ پاکستان نے طالبان حکومت کی پُرزور حمائت کی جو اب تک بھی جاری ہے۔ پاکستان افغانستان کی سلامتی، آزاد اور خود مختاری کا حامی ہے۔ دونوں برادر ملکوں  کے درمیان کشیدگی نہیں ہونی چاہیے۔ طالبان حکومت کو شکائت دور کرنے کے لئے اپنا اختیار استعمال کرنا ضروری ہے۔ بہتر ہوگا کہ دونوں ممالک کے درمیان اس مسئلہ پر براہ راست مذاکرات کئے جائیں تاکہ ایک دوسرے کی مشکلات کو سمجھا جا سکے اور مشترکہ طورپر ان سے نبٹنے کی کاوش کی جا سکے۔

مزید :

رائے -اداریہ -