قیادت کے ضمن میں مفید نظریہ ہے کہ ان سے مشورہ طلب کیجئے جو معلومات سے مالا مال ہیں لیکن بے اختیار ہونے کے باعث اپنے علم کا اظہار نہیں کر سکتے

قیادت کے ضمن میں مفید نظریہ ہے کہ ان سے مشورہ طلب کیجئے جو معلومات سے مالا مال ...
قیادت کے ضمن میں مفید نظریہ ہے کہ ان سے مشورہ طلب کیجئے جو معلومات سے مالا مال ہیں لیکن بے اختیار ہونے کے باعث اپنے علم کا اظہار نہیں کر سکتے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

مصنف:ڈاکٹر ڈیوڈ جوزف شیوارڈز
ترجمہ:ریاض محمود انجم
 قسط:64
میں نے پوچھا ”پھر کیا ہوا؟“
اس نے جواب دیا: اسے فوج سے قبل از وقت ریٹائرڈ کر دیا گیا۔ صرف یہی ایک غلطی اس کے زوال کا باعث نہیں تھی بلکہ اس کے ہاتھوں بے شمار غلطیاں سر زد ہوئیں تھیں۔ سالہا سال تک اس کا آمرانہ اور جابرانہ رویہ اس کے افسران کو تو متاثر کرتا رہا لیکن اس کا حد سے بڑھا ہوا آمرانہ رویہ بالآخر اس کے زوال کا باعث بن گیا۔
5: اپنے معاون عملے سے مشورہ/ رائے طلب کیجئے:
قیادت اور راہنمائی کے ضمن میں ایک بہترین اور مفید نظریہ اور تصور یہ ہے کہ ان افراد سے مشورہ اور رائے طلب کیجئے جو علم او ر معلومات سے مالا مال ہیں لیکن بے اختیار ہونے کے باعث وہ اپنی معلومات اور علم کا اظہار نہیں کر سکتے۔ حال ہی میں مجھے ہلٹن ہیڈ نامی جزیرے کے سفر کا اتفاق ہوا۔ اس سفر کے دوران ملک کے ایک سب سے بڑے تجارتی ادارے کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (Chief Executive Officer) کے ساتھ ملاقات میں اس نکتے کے متعلق اس کے ساتھ گفتگو ہوئی۔
وہ کہنے لگا: ”دیکھیے جب بھی ہمیں کسی مسئلے پر کسی مشورے یا رائے کی ضرورت ہوتی ہے تو اس ضمن میں میرے پاس بہت سے ذرائع موجود ہیں، جن میں سے ہم کسی کو بھی استعمال کر سکتے ہیں۔ اس وقت ہمارے ادارے میں 250سے زائد ایم بی اے کے حامل افراد موجود ہیں، جو بے شمار امور میں مہارت رکھتے ہیں۔“
اس نے اپنی بات جاری رکھتے ہوئے کہا ”لیکن سب سے قابل بھروسہ، قابل اعتماد اور بہت ہی معیاری اور بہترین مشیر، میری سیکرٹری ہے۔ اسے میرے ساتھ کام کرتے ہوئے پندرہ سال ہوچکے ہیں۔ جب میں کسی معاملے یا مسئلے مثلاً کسی اہم منصب کے لیے کونسا شخص موزوں ہے۔ کیا ہمیں دوسری کمپنی خرید لینی چاہیے، ہماری یہ نئی مصنوعہ فروخت ہو جائے گی، کے متعلق اس کی رائے اور مشورہ طلب کرتا ہوں تو وہ اس ضمن میں مجھے مایوس نہیں کرتی اور مجھے ایک ایماندارانہ اور بے لاگ رائے مشورہ دیتی ہے۔ او راکثر و بیشتر اس کی رائے اور مشورہ درست ثابت ہوتا ہے۔ ممکن ہے کہ اس کا عہدہ سینئر ایگزیکیٹو سیکرٹری (Senior Executive Secretary) ہو، لیکن میں نے یہ محسوس کیا کہ اس کا مرتبہ کہیں زیادہ ہے۔“
اس ضمن میں یہ افسر ایک نہایت ہی اہم نکتے کی طرف اشارہ کرتا ہے۔ ”ذہن اور قابل انجینئر اپنے کاریگروں سے مشورہ رائے طلب کرتے ہیں۔ سسٹمز اینالسس (System Analysis) اپنے پروگرامرز (Programmers) سے رائے اور مشورہ طلب کرتے ہیں۔ قابل اور ذہن سیلز منیجر (Sales Manager) شعبہ فروخت کے عملے سے رائے اور مشورہ طلب کرتے ہیں۔ اصل نکتہ اور حقیقت یہ ہے کہ ہم اپنے ماتحت اور معاون عملے سے بے شمار اچھے نظریات اور خیالات حاصل کرسکتے ہیں۔ ہمارے اس تمام ادارے میں ذہن اور ذہنی صلاحیتیں ہر دیگر موجود ہیں، اور ضروری نہیں کہ یہ ذہنی صلاحیتیں صرف اور صرف انتظامی اعلیٰ اختیاراتی افسران کی وراثت ہوں۔“(جاری ہے)
نوٹ: یہ کتاب ”بُک ہوم“ نے شائع کی ہے (جملہ حقوق محفوط ہیں)ادارے کا مصنف کی آراء سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

مزید :

ادب وثقافت -