محافظ فورس اہلکاروں کی عیدی مہم ،انکار پر حوالات میں بند کرنے کی دھمکیاں

محافظ فورس اہلکاروں کی عیدی مہم ،انکار پر حوالات میں بند کرنے کی دھمکیاں

لاہور (سٹی رپورٹر) صوبائی دارالحکومت میں عید کے پیش نظر سیکورٹی اور گشت پر مامور محافظ فورس کے اہلکاروں نے عیدی مہم کا آغاز کردیا۔ سیکورٹی کے بہانے موٹر سائیکل سواروں اور نوجوانوں کو روک کر زبردستی ”عیدی“ وصول کی جانے لگی اور انکار کی صورت میں موٹر سائیکل و گاڑی سمیت حوالات میں بند کرنے کی دھمکی کی پریکٹس شروع کردی گئی ہے معلوم ہوا ہے کہ اچھرہ، گلبرگ، مزنگ، لٹن روڈ، سمن آباد ،وحدت روڈ اور مسلم ٹاﺅن سمیت بیشتر علاقوں میں محافظ فورس کے اہلکاروں نے گروپ کی شکل میں لوگوں کو ڈرا دھمکا کر پیسے بٹورنے کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے۔ ان اہلکاروں کو متعلقہ ایس ایچ اوز کی جانب سے عید کے دنوں میں سیکورٹی حالات پر نظر رکھنے کیلئے گشت پر مامور کیا جاتا ہے مگر یہ اہلکار بازاروں یا اہم شاہراہوں پر ناکے لگانے کی بجائے سنسان اور تاریک گلیوں میں چھپ کر کھڑے ہو جاتے ہیں اور وہاں سے گزرنے والے موٹرسائیکل سواروں کو روک کر جامہ تلاشی کے بعد کاغذات طلب کرتے ہیں جبکہ سی سی پی او لاہور کی ہدایت کے مطابق محافظ فورس کے اہلکار لائسنس و دیگر کاغذات چیک کرنے کے مجاز نہیں ہیں۔ جبکہ کاغذات نہ ہونے کی صورت میں شہریوں کو تھانے بند کرنے کی دھمکی دی جاتی ہے جس کے بعد ایک اہلکار اسے سائیڈ پر لے جا کر مک مکا کی کوشش کرتا ہے اور بعدازاں 500 یا 1000 روپے کے عوض اسے چھوڑ دیا جاتا ہے۔ محافظ فورس کے اہلکار ایک علاقے میں 1 سے 2 گھنٹے تک اپنی یہ ”مہم“ جاری رکھتے ہیں اور اس کے بعد دوسرے علاقے میں چلے جاتے ہیں حالانکہ متعلقہ تھانے کی جانب سے ان علاقوں میں ان اہلکاروں کی ڈیوٹیاں بھی نہیں لگائی جائیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1