باچا خان کے پیرو کار بزدلانہ اور اوچھے ہتھکنڈوں سے مرعوب نہیں ہونگے :میا ں افتخار

باچا خان کے پیرو کار بزدلانہ اور اوچھے ہتھکنڈوں سے مرعوب نہیں ہونگے :میا ں ...

پشاور (پاکستان نیوز)خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات و تعلقات عامہ میاں افتخار حسین نے گزشتہ روز کراچی میں اے اےن پی سندھ کے جنرل سیکرٹری بشیرجان اور ان کے ساتھیوں پر قاتلانہ حملے کی شدید مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ فخرافغان باچا خان کے فلسفہ عدم تشدد پر یقین رکھنے والے اے این پی کے کارکن ایسے بزدلانہ اوراوچھے ہتھکنڈوں سے مرعوب نہیں ہوںگے بلکہ اس دھرتی دشمن جہاں کہیں بھی ہوںگے ان کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے۔ جمعہ کے روز جاری ہونے والے اپنے ایک مذمتی بیا ن میں میاں افتخار حسین نے کہا کہ اے اےن پی وہ جماعت ہے جس نے انگریز جیسی مضبوط قوت کا مردانہ وار مقابلہ کیا اور جہد مسلسل کے بعد انہیں یہ ملک چھوڑنے پر مجبور کیا۔انہوں نے بشیر جان اور دہشت گردی کے خلاف بر سر پیکار قوتوں کو حوصلہ دیتے ہوئے کہا کہ اس مشکل گھڑی میں وہ اپنے آپ کو تنہا نہ سمجھیںبلکہ پوری پارٹی اور صوبائی حکومت ان کے پشت پر کھڑی ہے اور ہم اس وقت تک چین سے بیٹھیں گے جب تک ملک دشمن عناصر اور دہشت گردی کے ناسور کا مکمل خاتمہ نہیں کیا جاتا۔وزیر اطلاعات نے کہا کہ ہم دہشت گردی ہی نہیں بلکہ دہشت گرد سوچ کے بھی خلاف ہیں اور ہم شعوری طور پر ان کے خلاف جدوجہد کر رہے ہیں۔جب تک دہشت گرد، دہشت گردی چھو ڑ کر حکومتی عملداری تسلیم نہیں کرتے اور معصوم وبے گناہ لوگوں کو نشانہ بناتے رہیں گے، ہم بھی ان پر بھرپور وار کریں گے۔انہوں نے عہد کیا کہ جس طرح امن اور حق کےلئے بابڑہ اور دہشت گردی کے خلاف جہاد میں ہما رے کارکنوں نے قربانیاں دی ہیں اسی طرح ہم بھی ان کی تقلید کرتے ہوئے دہشتگردوں کے خلاف اپنا جہاد جاری رکھیں گے۔ صوبائی وزیر نے بشیر جان اور ان کے دوسرے زخمی سا تھیوں کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے ان کی جلد صحت یا بی کیلئے دعا کی اور کہا کہ ہم پوری پختون قوم خصوصا پارٹی عہدیداروں اور کارکنوں کو سلام پیش کرتے ہیں جو سخت حالات کے باوجو د بھی دہشتگردی کے خلاف سینہ سپر ہو کر کھڑے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم حق پر ہیںاور انشاءاللہ آخری فتح حق کی ہی ہو گی اوران وحشی درندوں کا انجام انتہائی شرمناک ہو گا۔

مزید : صفحہ آخر