پی سی بی کو ذولقرنین کو پیار سے ہینڈل کرنا چاہئے، ماہر نفسیات

پی سی بی کو ذولقرنین کو پیار سے ہینڈل کرنا چاہئے، ماہر نفسیات

لاہور (اے پی پی )ماہر نفسیات ڈاکٹر مقبول بابری نے کہا ہے کہ ذولقرنین حیدر حساس اورباصلاحیت کرکٹر ہے تاہم اسے ابھی مزید کونسلنگ کی ضرورت ہے۔ہفتہ کے روز اے پی پی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ وہ ذولقرنین کے ساتھ دو دو گھنٹے کے چار سیشن کرچکے ہیںاور سیشن کے اختتام کے بعد وہ کافی حد تک خود کو بہتر محسوس کرتا تھا جس کا اظہار انہوںنے میڈیا میں بھی کیا تھا ۔ذولقرنین حیدر نے انتخاب عالم سے بھی معذرت کی تھی اور نیشنل کرکٹ اکیڈمی میں کامران اکمل کے ساتھ بھی پریکٹس کرتے رہے تھے ۔تاہم گزشتہ دو ماہ سے میرا ذولقرنین حیدر سے کوئی رابطہ نہیں ۔اب میڈیا کے ذریعے پتہ چلا ہے کہ اس نے فیس بک پر پھر کوئی اختلافی بات کی ہے تو ہوسکتا ہے کہ اس کا فیس بک کا اکاﺅنٹ ہیک ہوگیا ہو یاپھر ذولقرنین نے انتہائی مایوسی کے عالم میں ایسی بات کردی ہو۔ پی سی بی کو ذولقرنین حیدر کی حالت سمجھ کراسے پیار کے ساتھ ہینڈل کرنا چاہئے وہ اچھا انسان ہے ۔مقبول بابری نے کہاکہ ذولقرنین حیدر کے بارے میں دو ماہ قبل میری چیئرمین پی سی بی چوہدری ذکاءاشرف ،انتخاب عالم اور دیگر عہدیدار وں سے بات بھی ہوئی تھی اور سب ذولقرنین حیدر کواس کی اچھی کارکردگی کی وجہ سے ٹیم میں ایڈجسٹ کرنا چاہتے تھے ۔میں نے ذولقرنین حیدر کو سمجھایا تھا کہ وہ دوسروں کے معاملات کے بارے میں غور کرنا چھوڑ دے اور صرف کرکٹ اور اپنی پرفارمنس پر فوکس کرے اور اپنے کردار اور ٹیلنٹ کے ذریعے اپنا لوہا منوائے ۔مقبول بابری نے کہاکہ ذولقرنین حیدر کے ساتھ مزید سیشن کرنے کے بعد ہی پتہ چلے گا کہ وہ یکدم کیوں بریک ڈاﺅن ہوئے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی