سندھ کی ضلعی حکومتوں کی جانب سے ڈرگ لیبارٹری سے تصدیق کیے بغیر 1ارب کی ادویات کی خریداری کاانکشاف

سندھ کی ضلعی حکومتوں کی جانب سے ڈرگ لیبارٹری سے تصدیق کیے بغیر 1ارب کی ادویات ...

کراچی (نیٹ نیوز) سندھ کی ضلعی حکومتوں کی جانب سے ایک ارب روپے مالیت کی ایسی ادویات کی خریداری کا انکشاف ہوا ہے جن کی مرکزی یا صوبائی ڈرگ لیبارٹری سے تصدیق نہیں کروائی گئی۔ مال سال 2011-12ءکی آڈٹ رپورٹ کے مطابق سندھ بھر کی ضلعی حکومتوں کی جانب سے وفاقی اور صوبائی ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹریز کی جانب سے تصدیقی ٹیسٹ رپورٹس لئے بغیر ایک بلین روپے مالیت کی ادویات کی خریداری کی گئی اور لاکھوں مریضوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈالا گیا۔ 2006ءمیں سندھ کے محکمہ صحت کی جانب سےجاری ہونے والے نوٹیفکیشن میں کہا گیا تھا کہ صوبائی اور وفاقی ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹریز سے ڈرگ ٹیسٹ رپورٹ لئے بغیر کوئی دوا نہیں خریدی جاسکتی لیکن اس کے باوجود سندھ کے 23 اضلاع میں ایسی ادویات کی خریداری کی گئی اور کئی اضلاع میں تو خریداری کیلئے ٹینڈرز تک نہیں لئے گئے۔

مزید : صفحہ آخر