تیزی سے بلندیوں کی جانب مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آگئی

تیزی سے بلندیوں کی جانب مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آگئی

کراچی(آن لائن)تیزی سے بلندیوں کی جانب گامزن پاکستان اسٹاک مارکیٹ جمعرات کومندی کی لپیٹ میں آگئی اور کے ایس ای 100 انڈیکس40ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد سے نیچے گر گیا ،کاروباری اتار چڑھاؤ کے باعث انڈیکس 40ہزار200پوائنٹس کی حد کو چھونے کے بعد 39700پوائنٹس کی کم ترین سطح پر بند ہوا ، مندی کے سبب مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے 55ارب سے زائدروپے ڈوب گئے جس سے سرمائے کاحجم80کھرب سے گھٹ کر79کھرب روپے کی سطح آگیا۔جمعرات کو مارکیٹ میں کاروبار کے آغاز پر تیزی کا رجحان غالب رہا ،ملکی اور غیر ملکی سرمایہ کارتوانائی ،سیمنٹ ،فرٹیلائزر اور گیس سیکٹر میں سرگرم دکھائی دیئے جس کی وجہ سے ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس 40100اور 40200پوائنٹس کی دوبالائی عبور کرتا ہوا40214پوائنٹس کی تاریخی بلند سطح پر جا پہنچا تاہم تکنیکی کریکشن کے سبب فروخت کا دباؤ زیادہ ہونے سے انڈیکس 40ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد کو کھو بیٹھا اور39700پوائنٹس کی کم ترین سطح پر آگیا ۔تجزیہ کاروں کے مطابق اسٹاک مارکیٹ کے حصص خریدنے سے متعلق درخواستوں کی منظوری پر 40فیصد حصص غیر ملکی سرمایہ کاروں کو فروخت کئے جانے سے متعلق مختلف قیاس آرائیوں کے سبب مقامی سرمایہ کار تذبذ ب کا شکار رہے جس کی وجہ سے انہوں نے فروخت کا ترجیح دی تاہم تجزیہ کا روں کا ماننا ہے کہ اس حوالے سے افواہوں کے ختم ہونے کے بعد مارکیٹ دوبارہ تیزی کی جانب گامزن ہو جائے گی ۔جمعرات کو کاروبارکے اختتام پرکے ایس ای100انڈیکس میں286.32پوائنٹس کی کمی واقع ہوئی جس سے کے ایس ای100 انڈیکس 40057.52پوائنٹس سے کم ہو کر 39771.20 پوائنٹس پرآگیااسی طرح کے ایس ای30 انڈیکس 169.09پوائنٹس کی کمی سے 22748.10پوائنٹس اورکے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 26771.77 پوائنٹس سے گھٹ کر26587.95پوائنٹس پربندہوا۔

جمعرات کے روزمارکیٹ کے سرمائے میں55ارب6کروڑ9لاکھ77ہزار529روپے کی کمی ریکارڈکی گئی جس کے نتیجے میں سرمائے کامجموعی حجم80کھرب18ارب95کروڑ29لاکھ39ہزار171روپے سے کم ہوکر79کھرب63ارب89کروڑ19لاکھ61ہزار642روپے پرآگیا۔جمعرات کومارکیٹ میں23کروڑ90لاکھ54ہزارحصص کے سودے ہوئے اورٹریڈنگ ویلیو13ارب روپے تک محدودرہی جبکہ بدھ کے روز23کروڑ91لاکھ18ہزارحصص کے سودے ہوئے تھے اورٹریڈنگ ویلیو15ارب روپے ریکارڈکی گئی تھی ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں جمعرات کے روز مجموعی طورپر400کمپنیوں کاکاروبارہواجس میں سے99کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ،276میں کمی اور25کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔کاروبارکے لحاظ سے ٹی آرجی پاک لمیٹڈ3کروڑ4لاکھ،کے الیکٹرک لمیٹڈ2کروڑ1لاکھ،پیس پاک لمیٹڈ1کروڑ23لاکھ،نشات چونیا75لاکھ10ہزاراوردیوان سیمنٹ69لاکھ26ہزارحصص کے سودوں سے سرفہرست رہے۔قیمتوں میں اتارچڑھاؤکے اعتبارسے کولگیٹ پامولیوکے بھاؤمیں68روپے اورپنجاب آئل کے بھاؤمیں14.88روپے کااضافہ جبکہ رفحان میظ کے بھاؤمیں100.34روپے اوریونی لیورفوڈزکے بھاؤمیں80.83روپے کی نمایاں کمی ریکارڈکی گئی#/s#

مزید : کامرس


loading...