امریکا میں سیاہ فاموں کے خلاف بڑے پیمانے پر تعصب پایاجاتاہے،امریکی شہریوں کی رائے

امریکا میں سیاہ فاموں کے خلاف بڑے پیمانے پر تعصب پایاجاتاہے،امریکی شہریوں ...

واشنگٹن (اے پی پی) امریکہ کے 60فیصد سے زیادہ شہریوں نے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ ان کے ملک میں سیاہ فاموں کے خلاف بڑے پیمانے پر تعصب پایاجاتاہے۔ گیلپ سروے کے مطابق 82فیصد سیاہ فام امریکیوں اور 58فیصد سفید فام امریکیوں نے کہاکہ ان کے ملک میں سیاہ فام افراد کے خلاف بڑے پیمانے پر تعصب پایا جاتاہے اور یہ اعتراف کرنے والے امریکی شہریوں کی تعداد میں گزشتہ ایک سال کے دوران 7سے 10فیصد تک اضافہ دیکھا گیا ہے۔ سروے رپورٹ کے مطابق43فیصد سفید فام اور 33فیصد سیاہ فام باشندوں کے خیال میں ملک میں سفید فاموں کے خلاف بھی تعصب پایا جاتاہے ۔ امریکا میں نسلی تعصب میں اضافے کی وجہ 2014ء اور 2015ء کے دوران سفید فام پولیس اہلکاروں کے ہاتھوں سیاہ فام افراد کے قتل کے کئی واقعات ہیں جن کے خلاف پر تشدد احتجاجی مظاہرے بھی کئے گئے ہیں ۔

سیاہ فام افراد کے قتل کے واقعات میں حالیہ عرصہ کے دوران اضافہ دیکھا گیا ہے۔ رپورٹ میں مزید کہاگیاہے کہ صدر براک اوبامہ کے دوسرے دور اقتدار کے دوران ، ان کی پہلی مدت کے مقابلہ میں سیاہ فاموں کے خلاف تعصب میں اضافہ ہوا ہے۔

مزید : عالمی منظر