مقبوضہ کشمیر ، کشمیری لیکچرار بھارتی فوج کی حراست کے دوران قتل

مقبوضہ کشمیر ، کشمیری لیکچرار بھارتی فوج کی حراست کے دوران قتل

سرینگر (اے پی پی) مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران ضلع پلوامہ میں ایک لیکچرار کو شہید کردیا ہے۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق ضلع کے علاقے کھریوکے رہائشیوں نے صحافیوں کو بتایا کہ فورسز کے اہلکاروں نے بدھ کی شب ان کے گھروں میں زبردستی داخل ہو کر لوگوں کو ہراساں کیا اور لوٹ مار کی ۔انہوں نے کہاکہ اہلکاروں نے خواتین سمیت لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنایا اور 28افراد کو گرفتار کرلیا۔انہوں نے بتایا کہ 30 سالہ لیکچرار شبیر احمد مونگوکوبھی فورسز اہلکاروں نے تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد گرفتارکرلیا تھا ۔بعد ازاں انہوں نے شبیر کے اہلخانہ کو اسکی میت لے جانے کیلئے کہا۔فوجیوں نے شبیر کے بھائی کو بھی شدید زخمی کیا اور وہ سرینگر کے ایک ہسپتال میں زیر علاج ہے ۔

ذرائع ابلاغ کی اطلاعات میں پولیس کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ فوج نے شبیر کی میت اہلخانہ کے حوالے کرنے کیلئے پہلے پولیس سے رابطہ کیا تھا تاہم انہوں نے انکار کردیا تھا۔ مقامی افراد نے بتایا کہ گرفتار کئے گئے تمام کشمیریوں کو رہا نہیں کیا گیاہے۔

مزید : عالمی منظر


loading...