بھارت میں طالبہ نے اپنی زبان کاٹ کردیوی کی بھینٹ چڑھادی

بھارت میں طالبہ نے اپنی زبان کاٹ کردیوی کی بھینٹ چڑھادی
بھارت میں طالبہ نے اپنی زبان کاٹ کردیوی کی بھینٹ چڑھادی

  


مدھیا پردیش(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں حال ہی میں ہونے والے ایک خوفناک واقعے میں طالبہ نے اپنی زبان کاٹ کر دیوی کی بھینٹ چڑھادی۔مدھیا پردیش میں کالج کی 19 سالہ طالبہ آرتی دوبے نے اپنی زبان کاٹ کر کالی دیوی کے مندر میں چڑھادی تاکہ دیوی خوش ہوکر اس کی تمام خواہشات پوری کردے۔ٹی آر ایس کالج کی طالبہ نے مبینہ طور پر ایک خواب دیکھا تھا جس میں اسے دیوی نے کہا کہ اگر وہ اپنی زبان کاٹ کر اسے دے تو اس کے من کی ہر مراد پوری ہوجائے گی، طالبہ اگلے ہی روز مندر میں گئی اور زبان کاٹ کر بھینٹ چڑھادی۔ اگرچہ ماضی میں بہت سے ہندو کالی دیوی کو اپنے جسم کے حصے دان کرتے رہے ہیں لیکن ایک تعلیم یافتہ خاتون کی جانب سے اپنی زبان قربان کرنے کا یہ انوکھا معاملہ ہے۔مقامی صحافی کے مطابق اس سے قبل سادہ اور ان پڑھ لوگ اپنے اعضا کاٹ کر کالی دیوی کو دیتے رہے ہیں لیکن پڑھے لکھے افراد کی جانب سے ان واہموں پر عمل کرنے سے معاشرے پر نہایت مضر اثرات مرتب ہوسکتے ہیں۔ عینی شاہدین کے مطابق طالبہ مندر میں آئی اور بعض رسومات ادا کرنے کے بعد تیز بلیڈ سے اپنی زبان کاٹ ڈالی اور اس کے فوراً بعد وہ زمین پر گرگئی۔ مندر کے بچاریوں اور عوام کی جانب سے اسے اسپتال لے جانے یا ایمبولینس بلانے کی بجائے اسے اس پر دوپٹہ ڈال دیا اور اس کے لیے پوجا کرنے لگے۔کئی گھنٹے بعد لڑکی کو ہوش آگیا اور کسی نے اس کی مدد نہیں کی۔ لیکن لوگ اس وقت حیران رہ گئے جب وہ دوبارہ کھڑی ہوکر کالی دیوی کی پوجا کرنے لگی اور ہلکی مسکراہٹ کے ساتھ مندر کے چکر لگائے۔

زبان کاٹ کر

مزید : صفحہ آخر


loading...