کالا باغ ڈیم کے خلاف منفی پروپیگنڈا بھارتی ساز ش ہے،نہال ہاشمی

کالا باغ ڈیم کے خلاف منفی پروپیگنڈا بھارتی ساز ش ہے،نہال ہاشمی

کراچی(اسٹاف رپورٹر)پاکستان کے معاشی فیصلوں اور پالیسیوں میں ریسرچ کا فقدان ہے ،ویژن موجود ہے مگر اس پر عملدرآمد نہیں ہوتا ۔پاکستان کی معیشت میں انسانی حقوق کی روح موجود نہیں ،این جی اوز کو چاہیئے کہ وہ اپنی فنڈنگ کے لئے لوگوں کو بیچنا بند کرے ۔اشرافیہ طبقے کے تعلیمی ادارے متوسط اور غریب طبقے کے بچوں میں کم عمری سے ہی احساس کمتری پیداکردیتے ہیں ،اہل اور قابل لوگوں نے اپنے آپ کو سیاست سے دور کردیا جس کی وجہ سے نااہل افراد سیاست جیسے مقدس پیشے میں آگئے ۔ہماری نوجوان نسل اور قابل افراد کو چاہیئے کہ سیاسیات کو نظر انداز کرنے کے بجائے سیاست میں آئے اور ملک کی ترقی کے لئے اپنا مثبت اور کلیدی کردار اداکریں ۔ان خیالات کا اظہار سینیٹر نہال ہاشمی نے جامعہ کراچی کے اپلائیڈ اکنامکس ریسرچ سینٹر کے زیر اہتمام سینٹر ہذا میں منعقدہ سیمینار بعنوان: ’’پاکستان میں انسانی حقوق اور معاشی مسائل‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔نہال ہاشمی نے مزید کہا کہ پاکستان اب کوئلے کے ذریعے بجلی پیدا کرنے جارہاہے جبکہ چین اب اس نظام کو خیر باد کہہ چکا ہے ۔بھارت اعتراف کرچکا ہے کہ اس نے پاکستان کی انسانی حقوق کی تنظیموں اور قوم پرست لیڈران کو کالاباغ ڈیم کی تعمیر روکنے کے لئے منفی پروپیگنڈا کرنے کے لئے 19 ارب روپے کی خطیر رقم مہیا کی ۔سابق وزیر اعظم شوکت عزیز اور سابق وزیر خزانہ عبدالحفیظ پاشا درحقیقت آئی ایم ایف جیسی بین الاقوامی مالیاتی تنظیموں کے مہرے تھے جنہوں نے ملک کی معیشت کی کمر توڑ دی ۔شوکت عزیز نے لیز کا نظام متعارف کروایا جس کے متوسط طبقے کے لوگوں پر منفی اثرات مرتب ہوئے۔مغربی فری اکنامی کا نظام لوگوں کے مابین معاشی خلیج کو اس حد تک بڑھا دیتا ہے کہ معاشرے میں معاشی ناانصافیاں جنم لیتی ہیں اور اسلام اس غیر منصفانہ تقسیم وسائل کی نفی کرتاہے،اسلام وہ واحد مذہب ہے جس نے انسانی حقوق کو معیشت سے جوڑا۔گذشتہ دہائیوں میں انسانی حقوق کے مسائل کی ترویج کو مغرب بالخصوص امریکہ نے فروغ دیا جس کا مقصد انسانی حقوق کی پامالی کی آڑ میں مشرق وسطیٰ اور دوسرے ممالک میں فوجی مداخلت تھا ۔دنیا کے آغاز سے ہی امیر اور غریب طبقے میں وسائل کی جنگ رہی ہے اور ہمیشہ رہے گی۔اس موقع پر اپلائیڈ اکنامکس ریسرچ سینٹر کی ڈائریکٹر پروفیسر ڈاکٹر ثمینہ خلیل نے نہال ہاشمی کو سینٹر کی جانب سے شیلڈ بھی پیش کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...