2016:ا یچ بی ایل کو پہلے دورانئے میں16ارب کا منافع

2016:ا یچ بی ایل کو پہلے دورانئے میں16ارب کا منافع

کراچی (اکنامک رپورٹر) ایچ بی ایل نے 2016 کے پہلے دورانئیے کیلئے 16 ارب روپے کے بعد از ٹیکس ٹھو س منافع کا اعلان کیا ہے۔ فی شیئر آمدنی بڑھ کر 10.86 روپے رہی۔ اس نتیجے کے ساتھ بینک نے دوسری سہ ماہی کیلئے 3.50 روپے (35%) ڈیوڈینڈ دینے کا اعلان بھی کیا ہے۔ایچ بی ایل کی بیلنس شیٹ دسمبر 2015 کے مقابلے میں 6 فیصد اضافے کے بعد 2.4 کھرب روپے رہی۔ مقامی ڈپازٹس میں 9 فیصد اضافہ ہوا اور بینک کے مارکیٹ شیئر میں 14.3فیصد کا اضافہ ہوا۔ ڈپازٹ مکس میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے اور کرنٹ اکاؤنٹ اب مجموعی ڈپازٹ کا 34.7 فیصد ہیں۔ سال 2015 کی اس مدت کے مقابلے میں سال 2016 کے ابتدائی حصے میں اوسطاََ کرنٹ اکاؤنٹ میں 78 ارب روپے کا اضافہ ہوا جسکی بدولت ایچ بی ایل اپنے مقامی ڈپازٹ پر ہونے والے اخراجات میں 2.8 فیصد کمی لانے میں کامیاب ہوا۔ تمام سیگمنٹس میں اوسطاََ مقامی قرضوں میں اضافے کی بدولت بینک کی خالص انٹرسٹ کی آمدنی 6 فیصد اضافے کے بعد 41.4 ارب روپے رہی۔ فیس اور کمیشن میں مسلسل اضافہ ہوا جو 15 فیصد کے اضافے سے سال2016 کے پہلے حصے میں 9.3 ارب روپے رہی۔بینک اشورنس، تجارت، انوسٹمنٹ بینکنگ اور جنرل بینکنگ سے منسلک فیس کا نمایاں حصہ رہا۔ 2015 کی اسی مدت کے مقابلے میں انتظامی اخراجات میں اضافہ 10 فیصد تک محدود رہا اور پرو ویزن میں اضافی کنزرویٹو پرویزنگ کے باوجود 19 فیصد کمی ہوئی۔ کوریج کا تناسب 30 جون ،2016 کی گذشتہ سہ ماہی کے مقابلے میں بڑھ کر 89.2فیصد رہا۔ ایچ بی ایل نئی اور جدید پروڈکٹس متعارف کروانے کیلئے کو شاں ہے اور اپنی سروس کا معیار مسلسل بڑھا رہا ہے تاکہ کسٹمرز کو سہولیات فراہم کی جا سکیں اور ان کو بہترین تجربہ حاصل ہو۔ ایچ بی ایل کی اب تقریباََ 2,000 اے ٹی ایم (ATM )مشینیں اور 14,300 سے زیادہ پی او ایس(POS ) مشینیں ہیں۔ اس سال کے اوائل میں ایچ بی ایل نے اپنی موبائل ایپ متعا ر ف کروائی تھی اور حال ہی میں یہ پاکستان کا پہلا جبکہ دنیا کے بہت کم بینکوں میں سے ایک بینک بن گیا جو بائیومیٹرک طریقے سے اکاؤنٹ تک رسائی کی سہولت دے رہا ہے۔ 30جون، 2016 تک مجموعی کیپیٹل ایڈ وکیسی ریشو (CAR ) 16.8 فیصد رہا جبکہ Tier 1 کیپیٹل ایڈ وکیسی ریشو 12.8 فیصد رہا ۔کیپیٹل ریشو مستحکم رہا اور درکار سطح سے زیادہ رہا۔ JCR-VI Sنے بینک کی طویل مدت اور قلیل مدت ریٹنگ کو برقرار رکھا جو بالترتیب AAA/A-1+ ہے ۔ ان ریٹنگس کو مستحکم کیپیٹا لایزیشن ریشو اور ایچ بی ایل کے مضبوط لیکو ئڈٹی پروفائل کی معاونت حاصل ہے اور یہ ایچ بی ایل کی منظم اہمیت کی عکاسی کرتی ہیں۔ایچ بی ایل مسلسل شاندار نتائج دے رہا ہے۔ لیکوڈٹی اور کیپیٹل کے مناسب ریزروز کی موجودگی کی بدولت بینک ترقی کے مواقعوں سے فائدہ اُٹھانے کیلئے تیار ہے اور پاکستان کے وسیع ترین بینک کی حیثیت سے بینک پاکستان کی ترقی میں بھی کردار نبھانے کیلئے تیار ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر