ضلع کونسل ٹانک کا 1ارب 80کروڑ 13لاکھ سے زائد کابجٹ اتفاق رائے سے منظور

ضلع کونسل ٹانک کا 1ارب 80کروڑ 13لاکھ سے زائد کابجٹ اتفاق رائے سے منظور

ٹانک (بیورورپورٹ)ضلع کونسل ٹانک کا ایک ارب اسی کروڑ تیر ہ لا کھ چونتیس ہزار کا سال 2016-17 کا ترقیاتی اور غیر ترقیاتی بجٹ ضلع ناظم مصطفی کنڈی نے پانچویں روز بحث کے بعد منظور کروالیا بجٹ اجلاس زیر صدارت ضلع نائب ناظم افتاب بلوچ منعقد ہوا اجلاس میں پی ٹی ائی کے گیارہ ضلع ممبران جن میں ضلع ناظم مصطفی کنڈی ، ضلع نائب ناظم افتاب بلوچ ، ناصر جان لنگا، قیوم خان ، رمضان ، شوکت عمر ، ریحان کنڈی ، شازیہ ایوب، خولہ بی بی ، فہمید ہ بی بی اور کلثوم بی بی جبکہ جمعیت کی دو خواتین ممبران حفصہ بی بی اوربی بی زہر ہ بھی اجلاس میں شرکت کی۔بجٹ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ضلع ممبران کا کہناتھاکہ حالیہ ترقیاتی بجٹ کی منظوری ٹانک عوام کیلئے خوش ائند ہے بجٹ کی منظوری سے ٹانک کی تقدیر بدل جائیگی سازشی عناصر اپنی موت اپ مر جائیں گے ٹانک کی ترقی کی خاطر اپوزیشن اور ناراض ضلع ممبران کو ساتھ لیکر چلنے کو تیارہیں ۔انہوں نے کہا کہ مخالفین لاکھ کوششیں کریں مگر جیت ہمیشہ حق اور سچ کی ہی ہوگی ۔ واضح رہے کہ ضلع کونسل ٹانک کا سال 2016-17 کے ترقیاتی بجٹ پر چار روز بحث جاری رہی اور پانچویں روزضلع نائب ناظم افتاب بلوچ نے ترقیاتی اور غیر ترقیاتی بجٹ کی منظور کے لئے ووٹنگ کا سلسلہ شروع کیا توووٹنگ کے دوران پی ٹی ائی کے گیارہ جبکہ جمعیت علماء اسلام کی دو خواتین ممبران نے بجٹ منظوری کے حق میں ووٹ دیا ۔بجٹ منظوری میں سابقہ ایم پی اے قادر بیٹنی نے اہم کردار ادا کیا بجٹ اجلاس میں ضلع ناظم کے پاس پی ٹی ائی کے حمایتی ضلع ممبران کی تعداد گیارہ ہوگئی تھی جبکہ پاکستان تحریک انصاف کے چھ ضلع ممبران نجیب محسود ، امیر گل صوبیدار ، حاجی ظاہر شاہ ، نوابزدہ ظفر اللہ خان ، عدنان برکی اور عرفان خان کنڈی ضلع ناظم کے خلاف اپوزیشن جماعت کا حصہ بنے رہے واضح رہے کہ ضلع کونسل ٹانک کے کل ممبران کی تعداد چوبیس ہے جن میں گیار ہ ضلع ممبران ضلع ناظم کے حق میں جبکہ اپوزیشن کے پانچ اراکین سمیت تیرہ ضلع ممبران خلاف تھے جمعیت علماء اسلام کی دو خواتین ممبران حفصہ بی بی اور بی بی زہرہ نے ضلع کونسل کے بجٹ اجلاس میں شرکت کر کے ترقیاتی بجٹ کے منظوری کیلئے ضلع ناظم کے حق میں ووٹ کاسٹ کیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر