چینی فوج نے بڑے معرکے کی تیاری شروع کردی، ایسا کام کردیا کہ دشمنوں کی نیندیں اڑادیں

چینی فوج نے بڑے معرکے کی تیاری شروع کردی، ایسا کام کردیا کہ دشمنوں کی نیندیں ...
چینی فوج نے بڑے معرکے کی تیاری شروع کردی، ایسا کام کردیا کہ دشمنوں کی نیندیں اڑادیں

  


بیجنگ (نیوز ڈیسک) حال ہی میں بین الاقوامی ثالثی عدالت کی جانب سے بحیرہ جنوبی چین کی خودمختاری کا فیصلہ چین کے خلاف سنایا گیا تو امریکہ کے دیگر اتحادی ممالک کی طرح جاپان نے بھی چین کے خلاف بیان بازی شروع کردی۔ چین کی جانب سے امریکہ کو خبردار کرنے کے علاوہ اس کے اتحادیوں پر بھی واضح کیا جارہا ہے کہ خطے میں کسی بھی قسم کی غیر ذمہ دارانہ پیشرفت کا نتیجہ اچھا نہیں ہوگا۔ امریکا اور جاپان کو یہی پیغام دینے کے لئے چینی بحریہ نے بحیرہ جاپان کا رُخ کرلیا ہے، جہاں بڑے پیمانے پر جنگی مشقوں کا آغاز کر دیا ہے۔

غیر ملکی خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق چینی بحریہ نے ایک بیان میں کہا کہ بحیرہ جاپان میں جنگی مشقوں کا آغاز ہوچکا ہے، لیکن یہ نہیں بتایا گیا کہ یہ مشقیں بحیرہ جاپان کے کس حصے میں کی جارہی ہیں۔ پیپلزلبریشن آرمی ڈیلی کے مطابق جنگی مشقوں کے کمانڈر شو ہائی ہوا کا کہنا تھا کہ یہ مشقیں سالانہ روٹین کا حصہ ہیں اور ان کا مقصد بحری بیڑے کی دور دراز سمندروں میں جاکر لڑنے کی صلاحیت کو نکھارنا ہے۔

’چین سے جنگ کرنی ہے تو ابھی کرنی پڑے گی ورنہ۔۔۔‘ امریکی فوج کی خفیہ رپورٹ منظر عام پر آگئی، ایسی حقیقت کہ امریکیوں کی اپنی پریشانی کی بھی حد نہ رہی

اگرچہ چینی بحریہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ گہرے سمندر میں جاری یہ جنگی مشقیں سالانہ تربیتی انتظامات کا حصہ ہیں، لیکن دفاعی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ ان مشقوں کے ذریعے امریکہ اور جاپان تک یہ پیغام واضح الفاظ میں پہنچ گیا ہے کہ چین اپنی خودمختاری کے خلاف کسی بھی حرکت کا منہ توڑ جواب دے گا۔

مزید : بین الاقوامی


loading...