ملک مہنگا ترین خطہ، لاکھوں بیروزگار، یہ ہے پی ٹی آئی حکومت کی ایک سالہ کارکردگی: مسلم لیگ (ن) 

  ملک مہنگا ترین خطہ، لاکھوں بیروزگار، یہ ہے پی ٹی آئی حکومت کی ایک سالہ ...

  

  نارووال، اسلام آباد(نمائندہ خصوصی،این این آئی) مسلم لیگ (ن)کی ترجمان مریم اورنگزیب نے حکومت کی ایک سالہ رپورٹ پیش کرنے پر اپنے  بیان  میں کہاکہ نالائق، نااہل اور سلیکٹڈ حکومت اپنی تاریخی  ناکامیوں اور عوام پر ظلم کی داستان بڑے فخر سے سْنائیگی۔ انہوں نے کہاکہ سلیکٹڈ نالائق اور نااہل وزیراعظم ایک بار پھر اتنا جھوٹ بولیں گے کہ اپنے اگلے پچھلے تمام قائم ریکارڈ توڑ دیں گے۔انہوں نے کہاکہ عمران صاحب ایک سال کی بھوک، مہنگائی اور بے روزگاری کے سونامی کی تفصیلات سے عوام کو آگاہ کریں۔ انہوں نے کہاکہ پھر عمران صاحب اپنی ناکامیوں اور نالائقی کو پچھلی حکومتوں پہ ڈالنے اور چور چور ڈاکو ڈاکو کا چورن بیچیں گے۔ ایک سال میں پاکستان خطے کا دوسرا مہنگا ترین ملک بن گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ عمران صاحب بتائیں گے کہ ایک سال میں ترقی کی شرح آدھی اور مہنگائی تین گْنا بڑھ گئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ عمران صاحب بتائیں گے کہ ایک سال میں گیس کے نرخوں میں دو سو فیصد اور بجلی کی قیمت میں 53فیصد اضافہ کیا ہے، ایک سال میں سود کی شرح 5.25فیصد سے 13.75فیصد ہو گئی ہے۔ پشاور میٹرو کے کھڈوں کی قیمت ایک کھرب تک پہنچ گئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ عمران صاحب بتائیں گے کہ ایک سال میں سٹاک اِیکسچینج میں 32فیصد کمی ہو گئی، ایک سال میں ایک تولہ سونا 34050 روپے سے 88400 روپے ہو گیا۔ عمران صاحب عوام کو بتائیں گے کہ  ایک سال میں کتنے ارب ڈالر منی لانڈرنگ کے واپس آئے ہیں۔دریں اثنا مسلم لیگ (ن) کے جنرل سیکرٹری و سابق وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ ایک سال میں پاکستان بدلا ہے 10 لاکھ افراد بے روز گار ہو چکے ہیں، مہنگائی نے لوگوں کو خودکشیاں کرنے پر مجبور کردیا ہے،نیا پاکستان عوام کیلئے ایک خواب بن چکاہے، سی پیک کے منصوبے کو کولڈ سٹوریج میں ڈال دیا گیا ہے،ترقیاتی منصوبے رک چکے ہیں۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے نارووال میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ لوگ مہنگائی سے اپنا گھر بنانے سے عاجز آ چکے ہیں، سکالر شپ ختم ہو چکی ہے، اسٹاک مارکیٹ،زراعت اور صنعت بند ہو چکی ہے۔ احسن اقبال نے کہاکہ پی ٹی آئی نے 72 سالہ کا بڑا فراڈ کیا ہے۔ وزیر اعظم نے کہا تھا کہ 2 سو ارب جو باہر پڑے ہیں لیکر آؤں گا۔ وزیر اعظم کہتے تھے کہ 3 ہزار ارب کی روانہ کرپشن ہوتی تھی، اب ایماندار لوگوں کے آنے سے وہ 3 ہزار ارب اب کہا جاتے ہیں؟۔انہوں نے کہاکہ 15 ہزار ارب کے نئے ٹیکس لگائے، عمران خان نے اتنا ٹیکس بھی اکٹھا نہیں کیا جتنا ہم نے آخری سال کیا تھا،یہ حکومت قرضوں کا ورلڈ کپ جیت کر آئی ہے۔ بھارت نے وہ کام جو وہ 72 سالوں میں نہیں کیا۔پاکستان کے فضائی حدود کراس کی، کشمیر کو غصب کرنے کا عمل کیا یہ دونوں کام عمران خان کی کمزور پالیسوں کی وجہ سے ہوئی۔

مسلم لیگ (ن)

مزید :

صفحہ اول -