آزادی مارچ میں کارکن اور علماءبھرپور شرکت کریں‘ مولانا درویش

  آزادی مارچ میں کارکن اور علماءبھرپور شرکت کریں‘ مولانا درویش

  

صوابی( بیورورپورٹ) جمعیت علماءاسلام صوبہ خیبر پختونخوا کے سیکرٹری جنرل مولانا عطاءالحق درویش نے کہا ہے کہ ماہ اکتوبر میں قائد جمعیت مولانا فضل الرحمن کے اعلان کے مطابق اسلام آباد میں جے یو آئی کے زیر اہتمام ہونے والے آزادی مارچ میں کارکنوں اور علماءکرام کی بھر پور شرکت کو یقینی بنانے کے لئے باقاعدہ طور پر تیاریوں کا آغاز کر دیا گیا ہے اور اس سلسلے میں باقاعدہ آغاز چوبیس اگست کی صبح دس بجے نوشہرہ میں اور بعد ازاں اسی تاریخ کو دو بجے صوابی میں ضلعی جماعت کے زیر اہتمام ہونے والے بڑے بڑے اجتماعات سے کیا جائیگا ۔یہاں میڈیا سے آزادی مارچ اسلام آباد کے حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے صوبائی سیکرٹری جنرل مولانا عطاءالحق درویش نے کہا کہ صوبائی امیر سینیٹر مولانا عطاءالرحمن اور دیگر صوبائی اراکین کا صوبہ بھر کا دورہ گیارہ ستمبر تک جاری رہے گا صوبائی قیادت تمام اضلاع کا تفصیلی دورہ کرینگے انہوں نے کہا کہ اس وقت پاکستان کے عوام پی ٹی آئی کی حکومت سے انتہائی تنگ آچکے ہیں ۔ آزادی مارچ اسلام آباد کے ذریعے اس حکومت کا خاتمہ کر کے ملک کے عوام کو اس سے نجات دلائیں گے انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے اسلامی شعائر اور ناموس رسالت ایکٹ میں تر میم کر کے خاتمے کا عزم کر رکھا ہے اس لئے عوام کو اس حکومت سے نجات دلانا وقت کا تقاضا ہے ۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران نے اقتدار سے قبل کشمیر کو بھارت کے حوالے کرنے کا اشارہ دیا تھا اور اس کے لئے امریکی صدر ٹرمپ سے حالیہ ملاقات ایک رسمی کارروائی تھی انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے دنیا کی کوئی طاقت کشمیر کو پاکستان سے الگ نہیں کر سکتی انہوں نے کہا کہ کشمیر کی حیثیت کے حوالے سے بھارتی حکومت کے فیصلے پر پاکستانی حکومت سمیت اُمت مسلمہ کی خاموشی مجرمانہ ہے عمران نے دورہ امریکہ کے موقع پر ٹرمپ کے ساتھ ہونے والے ملاقات میں ان کو صرف تحفے میں کشمیر دیدیا انہوں نے کہا کہ جے یو آئی صوبہ بھر میں ہونے والے بلدیاتی انتخابات میں بھر پور انداز میں حصہ لے گی جے یو آئی کے کارکن اس کے لئے تیار ہے اور کونسلر سے لے کر ضلع تک ہونے والے بلدیاتی الیکشن میں حصہ لیں گے اور ہمارا دعوی ہے کہ خیبر پختونخوا میں جے یو آئی بلدیاتی الیکشن میں کلین سوئپ کرئے گی انہوں نے پی ٹی آئی کی حکومت سے بلدیاتی اداروں اور ضلعی حکومتوں کی فنڈز بند کرنے کی مذمت کر تے ہوئے مطالبہ کیا کہ صوبائی حکومت بلدیاتی اداروں کے فنڈز جلد از جلد ریلیز کریں ورنہ جے یو آئی اس کے خلاف عدالت سے رجوع کرئے گی۔ انہوں نے کہا کہ عمران کی حکومت نے بیرونی اشاروں پر سی پیک کا منصوبہ ختم کرنے اور اس میں رکاوٹ ڈالنے کی کوشش کر رہی ہے اس لئے اس منصوبے پر سست روی سے کام ہو رہا ہے یہ پی ٹی آئی حکومت کی سب سے بڑی ناکامی ہے اور یہ منصوبہ ختم کرنا بین الا قوامی ایجنڈا ہے جس پر عمران حکومت عمل پیرا ہے اسی طرح عمران نے کشمیر کے حوالے سے بھی امریکی ایجنٹ کا کر دار ادا کیا #

مولانا درویش

مزید :

پشاورصفحہ آخر -