پی  ڈبلیو  ڈی کمپلیکس کی بہال پور منتقلی 

پی  ڈبلیو  ڈی کمپلیکس کی بہال پور منتقلی 

  

ملتان سے شوکت اشفاق

پاکستانی قوم نے 14اگست یوم آزادی ملی جوش و جذبہ کے ساتھ منایا،ملک بھر کی طرح جنوبی پنجاب  میں بھی دن کا آغاز مساجد میں استحکام پاکستان اور ترقی و خوشحالی کی دعاؤں سے ہوا،طویل لاک ڈاؤن کے بعد شام سے رات گئے تک عوام کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکلی قبل ازیں مختلف سرکاری و غیر سرکاری تنظیموں نے جشن آزادی کے جلوس نکالے اور رات کو مختلف عمارتوں پر بھرپور چراغاں کیا گیا اور فضا پاکستان زندہ باد کے نعروں سے گونجتی رہی بچوں سمیت بڑوں نے بھی اس حوالے سے ملبوسات زیب تن کررکھے تھے،فیس ماسک اور قومی جھنڈے چہروں پر چسپاں کئے رکھے،مختلف شہروں میں نوجوانوں کی ٹولیاں سبز ہلالی پرچم لئے مارچ کرتی رہیں جبکہ ڈھول کی تھاپ پر رقص اور آتش بازی کا خوبصورت مظاہرہ،بھنگڑے ایونٹ کا خاصہ تھے جس کا انداز لگانا بہت آسان تھا کہ قوم اپنے وطن سے کتنی محبت کرتی ہے اور اپنی آزادی کا دن کس طرح جوش و خروش سے مناتی ہے،متعدد علاقوں میں مخیر حضرات نے رات گئے تک جشن آزادی منانے والوں میں کھانے بھی تقسیم کئے۔ادھر قومی غذائی تحفظ اور تحقیق کے وفاقی وزیر سید فخر امام نے گند م کی کم پیداوار کا کاشتکاری کے بوسیدہ نظام کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے اور کہا ہے کہ فصلوں کی کاشت میں عدم توازن کی وجہ سے 50فیصد کم پیداوار ہوئی ہے اس مسئلے کو پالیسی اقدامات کے ذریعے حل کرنے کی ضرورت ہے،کپاس ملکی معیشت کی پیش رفت میں مدد فراہم کرسکتی ہے۔اس کیلئے ہمیں یونیورسٹیوں کے زرعی تحقیقی مراکز کو اپ گریڈ کرنا ہوگا تاہم اب بھی ہم 90سے 95فیصد غذا میں خود کفیل ہیں۔دنیا فصلوں کی پیداوار میں ہائی ویلیو ٹارگٹ کی طرف جارہی ہے لیکن ہم لو ویلیو ٹارگٹ کی طرف جارہے ہیں ایسا گند م کی بہترین قسم کا انتخاب اور بروقت کاشت کی ضرورت ہے تاکہ ضرورت کے مطابق گندم پیدا کرنے کا ٹارگٹ حاصل کیا جاسکے۔ وفاقی وزیر نے اس بات پر روشنی نہیں ڈالی کہ یہ سب کچھ کسان کو کرنا ہوگا یا پھر متعلقہ ادارے یا حکومت کوئی رہنمائی بھی دے گی کیونکہ اس وقت گندم،آٹے اور چینی کا بحران اپنی تاریخی سطح پر ہے کھلی مارکیٹ میں فی کلو آٹے کی قیمت 70روپے سے زیادہ ہوچکی ہے جبکہ سپریم کورٹ کے احکام ہیں کہ عوام کو70روپے کلو چینی فراہم کی جائے پس پشت ڈال کر اس وقت 100روپے فی کلو فروخت کی جارہی ہے۔یوٹیلٹی سٹورز پر دونوں ضروری اشیاء ناپید ہیں اور عوام مہنگے داموں آٹا خریدنے پر مجبور ہیں کیونکہ اس حوالے سے انتظامیہ نے چپ سادھ رکھی ہے اور مارکیٹ میں گراں فروشوں کا راج ہے۔

ادھر مسلم لیگ(ن)کے سینئر رہنما مخدوم جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ عمران خان سیاسی مخالفین کو نیب کے ذریعے جیل میں ڈال کر اپنی تسکین کرلیں گے تو نیب ختم کرنے کیلئے خود اسمبلی میں ترمیم لائیں گے،نیب سیاسی جماعتوں کو توڑنے اور عوامی نمائندوں کو خوار کرنے کا ادارہ ہے جس کے افسر خود کرپٹ ہیں۔نیب کے اپنے ٹارچر سیل ہیں جہاں لوگوں کی وفا داریاں تبدیل کرائی جاتی ہیں،گزشتہ روز مریم نواز کی نیب کی پیشی کے موقع پر کارکنوں کو تشدد کا نشانہ بنا کر آمریت کی یاد تازہ کردی گئی ہے یہ واقعہ ایک قابل مذمت سانحہ ہے،اب مریم نواز کو اس ادارے سے سزا دلوانے کی کوشش کی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ ناقص خارجہ پالیسی کی وجہ سے ہمارے دوست ممالک بھی ہم سے منہ موڑ رہے ہیں اور پاکستان تنہا ہوتا جارہا ہے،جاوید ہاشمی نے دعویٰ کیا کہ حقیقی تبدیلی عنقریب آنے والی ہے اور موجودہ تبدیلی ختم ہورہی ہے،انہوں نے چیف جسٹس سپریم کورٹ سے اپیل کہ وہ از خود نوٹس کے ذریعے تین ریٹائرڈ چیف جسٹس حضرات کو وطن واپس بلائیں،عوام موجود ہ حکومت سے تنگ ہیں ان کیلئے دو وقت کی روٹی کا حصول مشکل ہوگیا ہے اور مافیاز عمران خان کے اردگرد جمع ہیں،سارے چینی چور آٹا چور حکومت کا حصہ ہیں اور موجودہ صورتحال میں وزیر اعظم عمران خان چاہتے ہوئے بھی وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کو عہدے سے نہیں ہٹا سکتے جبکہ ق لیگ مصلحتوں کا شکار ہے،اس لئے پنجاب میں تبدیلی دکھائی نہیں دے رہی تاہم موجودہ حکومت کے پانچ سال مکمل کرنے کے حوالے سے حق میں ہوں تاکہ ملکی عوام تبدیلی سرکار کو بخوبی پہچان سکیں۔

دوسری طرف پاک پی ڈبلیو ڈی کے دفتر کی ملتان سے بہاولپور منتقلی کیخلاف تحریک انصاف کے ایم این اے ملک احمد حسین ڈیہڑ نے عدالت عالیہ سے رجوع کرلیا ہے۔رٹ پٹیشن بیرسٹر ریحان جوئیہ ایڈووکیٹ نے دائر کی ہے،ذرائع کا کہنا ہے کہ جمعہ کے روز ایم این اے ملک احمد حسین ڈیہڑنے ملتان ہائی کورٹ میں پاک پی ڈبلیو ڈی کے دفتر کی منتقلی کے خلاف ایک پٹیشن دائر کردی۔رٹ میں موقف اختیار کیا گیا کہ وفاقی وزیر طارق بشیر چیمہ نے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے مفاد عامہ کے خلاف اپنے ذاتی مقاصد کیلئے 30سال سے ملتان میں کام کرتے دفتر کو فوری طور پر بہاولپور منتقلی کا نوٹیفکیشن جاری کیا۔عدالت عالیہ کو بتایا گیا کہ پاک پی ڈبلیو ڈی کمپلیکس 9کروڑ کی خطیر رقم سے تعمیر کیا گیا ہے۔اس سلسلہ میں ملک احمد حسین ڈیہڑ سے رابطہ کیا گیا تو ان کا کہنا تھاکہ کسی کو ذاتی مقاصد کیلئے دفتر منتقلی کی اجازت ہر گز نہیں دے سکتے۔اس قسم کے فیصلے کابینہ کی منظور ی کے بغیر نہیں ہوسکتے۔پاک ،پی،ڈبلیوڈی کا دفتر خطہ کے مرکز میں ہے۔بہاولپور منتقلی سے دوسرے شہروں کے لوگوں کو مشکلات ہوں گی،ذاتی کمپلیکس کو چھوڑ کر دوسرے شہر میں کرائے کی عمارت میں ادارہ منتقل کرنا دانشمندانہ فیصلہ نہیں ہے۔اس فیصلے سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ ملتان کی مرکزی حیثیت کو ختم کرنے کی منظم سازش کی جارہی ہے جسے کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

جنوبی پنجاب، یوم آزادی  پرجوش  طریقے  سے  منایا گیا، ملکی ترقی اور سلامتی کے لئے  دعائیں،کھانے بھی تقسیم کئے گئے

سینیئر سیاسی راہنما  جاوید ہاشمی نے موجودہ حکومت کو پانچ سال کی مدت پوری کرنے کی پھر حمائت کی،عوام پوری طرح  حقیقت جان لیں گے

پی  ڈبلیو  ڈی کمپلیکس کی بہال پور منتقلی،تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی  ملک احمد حسن ڈیہڑ نے چیلنج  کر دی

مزید :

ایڈیشن 1 -