قانون سازی سے متعلق چاروں صوبوں کی کارکردگی میں نمایاں بہتری آئی: پلڈاٹ 

قانون سازی سے متعلق چاروں صوبوں کی کارکردگی میں نمایاں بہتری آئی: پلڈاٹ 

  

 اسلام آباد (خصوصی رپورٹ)پلڈاٹ کی جانب سے صوبائی اسمبلیوں کی سالانہ کارکردگی کے جائزے کے مطابق دوسرے پارلیمانی سال میں صوبائی اسمبلیوں کے ذریعہ قانون سازی کی کارکردگی میں نمایاں بہتری واقع ہوئی ہے۔ پاکستان کی 4 صوبائی اسمبلیوں کی کارکردگی کا تقابلی جائزہ یہ ظاہر کرتا ہے کہ خیبر پختونخوا کی صوبائی اسمبلی نے دوسرے پارلیمانی سال کے اختتام پر دیگر صوبائی اسمبلیوں کی نسبت بہتر قانون سازی کی ہے۔ کے پی اسمبلی نے دوسرے سال میں 59 قانون پاس کیے، پنجاب کی صوبائی اسمبلی نے 41 قوانین پاس کیے سندھ نے 24 قوانین منظور کیے ہیں جبکہ بلوچستان کی صوبائی اسمبلی نے  دوسرے سال کے دوران صرف 8 قوانین پاس کرکے تینوں اسمبلیوں سے پیچھے رہے۔ جیسا کہ ہر صوبائی اسمبلی میں دیکھا جاتا ہے قوانین کی منظوری کے تقابلی تجزیے سے پتا چلتا ہے کہ بلوچستان اسمبلی کے، جو پہلے سال کے مقابلے میں کم بل منظور کرتا ہے، باقی 3 اسمبلیوں میں بھی قانون سازی کی سرگرمیوں میں اضافہ ہوا ہے۔ 

پلڈاٹ رپورٹ

مزید :

صفحہ آخر -