معصوم بچی سے زیادتی اور قتل کا واقعہ المیہ ہے، حکومتی رٹ نہیں: میاں افتخار حسین 

معصوم بچی سے زیادتی اور قتل کا واقعہ المیہ ہے، حکومتی رٹ نہیں: میاں افتخار ...

  

نوشہرہ (بیورورپورٹ)عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل میاں افتخار حسین نے حمزہ رشکہ میں 6سالہ سیما نامی بچی کے ساتھ زیادتی اور قتل کے دلخراش واقعے کو المیہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ملک میں حکومتی رٹ نامی کوئی چیز نہیں غریب کا جان و مال و عزت تک محفوظ نہیں۔ دہشتگردی آج بھی کسی نہ کسی صورت موجود ہے حکومت نے مظلوم خاندان کو نہتا چھوڑ کر یہ ثابت کر دیا ہے کہ حکمرانوں کو سیاسی انتقام سے فرصت نہیں، وہ معصوم کلیوں کو مسلنے والوں کے ہاتھ کیسے روکیں گے، سانحہ حمزہ رشکہ حکمرانوں کے منہ پر طمانچہ ہے، ان خیالات کا اطہار انہوں نے میڈیا کے نمائندوں سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ جنسی زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 6سالہ بچی کاقاتل تو گرفتار ہو ا لیکن اب تک کسی وفاقی و صوبائی حکومتی شخصیت نے متاثرہ خاندان سے اظہار افسوس و تعزیت کیلئے جانا تک گوارا نہ کیا اور نہ متاثرہ خاندان کی حکومتی سطح پر کوئی داد رسی کی گئی، حکومت وقت بچوں کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے والے اسمبلی سے منظور شدہ قوانین پر عمل درآمد کو کیوں یقینی نہیں بنا پا رہی ہے آخر ایسے کونسے عوامل ہیں جو کہ ان قوانین کے نفاذ میں آڑے آرہے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ حکومت وقت بتائے کہ انہوں نے متاثرہ خاندان کی کیا داد رسی کی انہوں نے کہا کہ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ متاثرہ خاندان کی نہ صرف مالی امداد کی جائے بلکہ ان کو کیس کیلئے قانونی ماہرین کی ٹیم بھی فراہم کی جائے انہوں نے کہا کہ یہ پہلا واقعہ نہیں اس سے پہلے ایسے کئی واقعات رونما ہوئے لیکن حکمران موثر قانون ساز ی کرنے اور ان پر عمل درآمد کرنے میں بری طرح ناکام ہے حکومت کو سیاسی انتقام سے فرصت نہیں اور ادارے غریب و مظوم عوام کے مسائل کے حل میں سنجیدہ نہیں، یہ موجودہ حکمرانوں کی سیاسی نابالغ ہونے کا منہ بولتا ثبوت ہے، انہوں نے کہا کہ ہم یہ کہنے میں حق بجانب ہیں کہ ہمارے معاشرے میں تشدد اور دہشتگردی کا عنصر تاحال موجود ہے اورسانحہ حمزہ رشکہ اسی تشدد اور دہشتگردی کی ایک کھڑی ہے، انہوں نے کہا کہ تشدد اور دہشتدگری جس انداز میں بھی ہو عوامی نیشنل پارٹی اس کے خلاف ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -