درگئی بار ایسوسی ایشن کا درگئی جوڈیشل کمپلیکس کے فوری تعمیر کا مطالبہ 

    درگئی بار ایسوسی ایشن کا درگئی جوڈیشل کمپلیکس کے فوری تعمیر کا مطالبہ 

  

سخاکوٹ(نمائندہ  پاکستان)درگئی بار ایسوسی ایشن نے درگئی جوڈیشل کمپلیکس کے فوری تعمیر کا مطالبہ کردیا۔ کمپلیکس کے لئے جگہ اور فنڈز مختص کئے گئے ہیں لیکن اس کے باوجود ٹھیکیدار اور محکمہ سی اینڈ ڈبلیو ملاکنڈ تعمیراتی کام میں ٹال مٹول کر کے تاخیری حربے استعمال کر رہے ہیں۔ اس سلسلے میں درگئی بار ایسوسی ایشن کا اجلاس زیر صدارت صدر محمد ریاض ایڈوکیٹ منعقد ہوا جس میں بار کونسل کے سینئر وکلا محمد رازق ایڈوکیٹ، گوہر علی ایڈوکیٹ، عمیر شہزاد ایڈوکیٹ اور پیرزادہ محمد الیاس ایڈوکیٹ سمیت ایسوسی ایشن کے ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس سے خطاب کے دوران درگئی جوڈیشل کمپلیکس کے تعمیراتی کام میں ٹال مٹول اور تاخیری حربوں پر تشویش کا اظہار کیا گیا اور کہا گیا کہ تمام تیاریاں مکمل کرکے بلڈنگ کے سنگ بنیاد کے لئے تاریخ بھی مقرر کی گئی تھی لیکن سی اینڈ ڈبلیو ملاکنڈ کے ایکسین اور متعلقہ ٹھیکیدار جوڈیشل کمپلیکس پر کام شروع کرنے میں حیلے بہانوں سے کام لے رہے ہیں جس سے وکلا برادری میں شدید تشویش پائی جاتی ہے۔ درگئی بار ایسوسی ایشن کے وکلا نے وزیر اعلی خیبر پختونخواہ محمود خان اور مقامی ایم پی اے پیر مصور خان غازی نے مطالبہ کیا کہ جوڈیشل کمپلیکس کے تعمیراتی کام میں تاخیری حربوں کی تحقیقات کرکے ذمہ دار افراد کے خلاف کاروائی کریں کیونکہ مذکورہ کمپلیکس کے تعمیر میں تاخیر سے وزیر اعلی اور مقامی ایم پی اے کے بد نامی کا سبب بن رہا ہے۔ وکلا نے مطالبہ کیا کہ جوڈیشل کمپلیکس کے تعمیرپر جلد از جلد کام شروع کیا جائے بصورت دیگر ذمہ داروں کے خلاف احتجاجی تحریک شروع کرینگے    

مزید :

پشاورصفحہ آخر -