کویت میں مزدوری کرنیوالوں کا مطالبات کے حل کیلئے احتجاجی مظاہرہ

کویت میں مزدوری کرنیوالوں کا مطالبات کے حل کیلئے احتجاجی مظاہرہ

  

 پشاور(سٹی رپورٹر)گذشتہ روزصبح دس بجے سے دو پہر 2بجے تک کویت میں مزدوری کرنے والے پاکستانیوں نے اپنے مطالبات کے حق میں پشاور پریس کلب کے باہر زبردست مظاہر ہ کیا اور علامتی دھرنابھی دیا مظاہرے میں خیبر پختونخوا اور پنجاب سے تعلق رکھنے والے سینکڑوں مظاہرین نے صدر شاہ ولی‘نائب صدر عبدالواحد اور جنرل سیکرٹری حاجی الف خان کی قیادت میں حصہ لیا اس موقع پر صدر شاہ ولی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ انکے اقامے تین ماہ قبل ایکسپائر ہوچکے ہیں اورہم اپنا کاروبا ر کویت میں چھوڑ کر پاکستان میں دن گزار رہے ہیں انہوں نے کہاکہ کویتی سفارتخانے نے انکے اقامے ریونیو کرنے سے صاف انکار کردیا ہے اور جس کے بعد انہوں نے اسلام آبا د میں سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر صاحب اور وزیراعظم کے مشیر برائے اوورسیز پاکستانی ذوالفی بخاری سے بھی متعدد بار رابطے کئے ہیں لیکن انکی کوئی شنوائی نہیں ہوئی جس سے مجبور ہوکر ہم نے آج احتجاج کاراستہ اپنایاہے انہوں نے حکومت کو دو ہفتے کا  الٹی میٹم دیتے ہوئے کہاکہ اگر حکومتی سطح پر ہمارے مطالبات کویت کے حکومت سے نہ اٹھائے گئے تو ہم 31اگست کو پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے دھرنا دینگے‘ جس میں پاکستان بھر سے متاثرین کویت شرکت کرینگے انہوں نے وزیراعظم عمران خا ن‘ آرمی چیف قمر جاوید باجوہ اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے اپیل کی ہے کہ وہ اس مسئلے کو سفارتی سطح پر کویت کے حکومت کے ساتھ اٹھائے بصورت دیگر احتجاج کاراستہ اپنایاجائیگا جس کی تمام تر ذمہ داری حکومت وقت پر ہوگی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -