سندھ حکومت نے لسانی بنیادوں پر حلقہ بندیاں کیں،خالد مقبول صدیقی کا الزام

سندھ حکومت نے لسانی بنیادوں پر حلقہ بندیاں کیں،خالد مقبول صدیقی کا الزام
سندھ حکومت نے لسانی بنیادوں پر حلقہ بندیاں کیں،خالد مقبول صدیقی کا الزام

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن )متحدہ قومی موومنٹ پاکستان   کے رہنما خالد مقبول صدیقی کا کہنا ہے کہ حلقہ بندیاں کرنا صوبائی حکومت کے دائرہ اختیار میں نہیں آتا، سندھ حکومت نے شہری اور دیہی علاقوں کی حلقہ بندیاں لسانی بنیادوں پر کی ہیں ۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایم کیو ایم رہنما کا کہنا تھاکہ سندھ حکومت نے شہری اور دیہی علاقوں میں حلقہ بندیاں کی ہیں ،حلقہ بندیاں سپریم کور ٹ کے فیصلے کیخلاف ہے ، سپریم کور ٹ کے فیصلے میں کہا گیا ہے کہ الیکشن کمیشن حلقہ بندیاں کر سکتا ہے ،حلقہ بندیوں کا کام صرف الیکشن کمیشن کر سکتا ہے ۔

خالد مقبول صدیقی کا مزید کہنا تھا کہ ایم کیو ایم بلدیاتی الیکشن میں کسی قسم کی تاخیر نہیں چاہتی، ہم سپریم کورٹ بلدیاتی انتخابات ملتوی کرانے نہیں گئے تھے ،بلدیاتی انتخابات پر ایک دن کی بھی تاخیر نہیں چاہتے،الیکشن سے قبل حلقہ بندیوں میں اتنا بڑا فرق ، دھاندلی ہے ، کراچی اور حیدر آباد کی اکثریت کو اقلیت میں تبدیل کیا گیا ہے ۔حلقہ بندیاں آئین و قانو ن کی دھجیاں بکھیرنے کے مترادف ہے۔

مزید :

قومی -