آدمی نے اپنی بیگم کا پرس کھولا تو اندر رکھا ایک کاغذ نظر آگیا، اس کاغذ پر کیا انتہائی شرمناک بات لکھی تھی؟ کبھی سوچ بھی نہ سکتا تھا، زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا

آدمی نے اپنی بیگم کا پرس کھولا تو اندر رکھا ایک کاغذ نظر آگیا، اس کاغذ پر کیا ...
آدمی نے اپنی بیگم کا پرس کھولا تو اندر رکھا ایک کاغذ نظر آگیا، اس کاغذ پر کیا انتہائی شرمناک بات لکھی تھی؟ کبھی سوچ بھی نہ سکتا تھا، زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا

پیرس(مانیٹرنگ ڈیسک) فرانس میں ایک شوہر نے اپنی بیگم کا پرس کھول کر دیکھا تو اندر موجود ایک کاغذ نظر آیا۔ جب اس نے کاغذ نکال پر پڑھا تو اس پر ایسی شرمناک تحریر لکھی تھی کہ شوہر کو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 43سالہ سابق بینکار میرک گروسجین کی بیوی میزی بربیری کے پرس سے برآمد ہونے والے کاغذ پر فحش جملے لکھے تھے جو دراصل ایک جنسی گیم تھی جو وہ ایک ہوٹل میں اپنے محبوب کے ساتھ کھیلتی رہی تھی۔ یہ گیم جس کاغذ پر کھیلی گئی تھی اس پر ہوٹل کا نام موجود تھا۔ بیوی کی بے وفائی کا انکشاف میرک پر بجلی بن کر گرا اور اس نے کاغذ اپنی بیوی کو دکھاتے ہوئے اس کے متعلق پوچھا تو وہ صاف مکر گئی اور کہا کہ میں یہ گیم اپنی ایک خاتون دوست کے ساتھ کھیلتی رہی ہوں۔ بربیری نے اپنی دوست سے ملنے کی جگہ بھی مختلف بتائی۔

شادی سے پہلے یہ کام کرنے کی وجہ سے میری ازدواجی زندگی بے حدخوشحال، مسلمان لڑکی نے انٹرنیٹ پر دھوم مچادی

میرک نے گاڑی کا کمپیوٹر چیک کیا تو معلوم ہوا کہ بربیری واقعی اس ہوٹل گئی تھی جس کا کاغذ اس کے پرس سے برآمد ہوا تھا۔ اس سے صاف ظاہر ہو گیا کہ وہ جھوٹ بول رہی تھی۔ بعد ازاں میرک نے اس کا فون چیک کیا تو اس میں بھی اس کے محبوب کے پیغامات موجود تھے جن میں اس نے اسے ہوٹل بلایا تھا۔ اس کے بعد جب میرک نے بربیری کی ای میلز چیک کرنے کے لیے اس کا لیپ ٹاپ اٹھانا چاہا تو دونوں میں جھگڑا ہو گیا جس پر میرک نے اسے دو ہاتھ رسید کر دیئے۔ اس پر بربیری نے پولیس کو اطلاع دے دی اور جھگڑا عدالت میں پہنچ گیا۔ بربیری کے چہرے اور کلائی پر خراشیں بھی آئی تھیں جس پر زیریں عدالت نے میرک کو 8ہفتے قید اور جرمانے کی سزا سنا دی۔ تاہم ہائیکورٹ میں جب بربیری نے اپنے معاشقے کا اعتراف کر لیا تو عدالت نے میرک کی قید کی سزا ختم کر دی۔ اب دونوں نے طلاق کے لیے درخواست دے رکھی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...