دنیا کے ممالک450 ایٹمی بجلی گھروں سے بجلی کی پیداوار حاصل کرتے ہیں:رپورٹ

دنیا کے ممالک450 ایٹمی بجلی گھروں سے بجلی کی پیداوار حاصل کرتے ہیں:رپورٹ
دنیا کے ممالک450 ایٹمی بجلی گھروں سے بجلی کی پیداوار حاصل کرتے ہیں:رپورٹ

اسلام آباد (ویب ڈیسک) دنیا بھر میں450ایٹمی ریکٹر ایٹمی بجلی پیدا کررہے ہیں مزید 60نیو کلیئر پاور پلانٹ زیر تعمیر ہیں۔ سونامی کے بعد جاپان نےاپنے ایٹمی بجلی گھر بند کرنے کا اعلان کیا تھا کچھ بند بھی کر دیئے تھے مگراب جاپان نے باقاعدہ معائنے اور سیفٹی فیچرز (Safety Features) بڑھانے کےبعد بتدریج اپنے بند کئے گئے ایٹمی بجلی گھر آپریشنل کر دیئے ہیںچین بھارت وغیرہ نئے ایٹمی بجلی گھر تعمیر کرنے کا پلان بنا رہے ہیں 450 ایٹمی بجلی گھر جو دنیا بھر میں بجلی پیدا کررہے ہیں۔

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں

روزنامہ جنگ کے مطابق ا ن میں سب سے زیادہ امریکہ میں ہیں جن کی تعداد 99 ہے فرانس میں 58 ایٹمی بجلی گھروں سے سستی بجلی بنائی جارہی ہے چین میں 36 ایٹمی بجلی گھروں سے حاصل ہورہی ہے۔ ایٹمی بجلی گھروں کے حوالے سے بھارت چوتھے نمبر پر ہے جہاں 22 ایٹمی بجلی گھر بنا رہے ہیں۔ پاکستان میں صرف3 ایٹمی بجلی گھر چشنوب- ون ٹو تھری بجلی بنانے لگے ہیں دنیا بھر میں 60 زیر تعمیر ایٹمی بجلی گھر ہیں جن میں سے چین میں 20، روس میں 7 بھارت میں 5 یو اے ای میں 4 امریکہ میں 4 اور پاکستان میں 3 ہیں۔ پاکستان میں زیر تعمیر تین ایٹمی بجلی گھر چشنوب فور، کراچی ٹو اور کراچی تھری ہیں۔ دنیا بھر میں زیادہ بجلی پیدا کرنیوالے ایٹمی بجلی گھر تعمیر کرنے کا رجحان ہے جو 1400 میگاواٹ تک بجلی بنانے کی صلاحیت رکھتے ہیں پاکستان کے کے -ٹو اور کے- تھری (کراچی ٹو اور کراچی تھری) ایٹمی بجلی گھروں سےگیارہ گیارہ سو میگاواٹ بجلی2020-2021 سال میں قومی گرڈ میں شامل ہوگی۔

مزید : اسلام آباد

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...