کرپشن پرپی سی بی بھی نیب کے شکنجے میں آگیا

کرپشن پرپی سی بی بھی نیب کے شکنجے میں آگیا

لاہور(آئی این پی)پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی ) بھی دیگر کئی اداروں اور اعلی شخصیات کی طرح قومی احتساب بیورو(نیب)کے شکنجے میں آگیا ہے، ایف آئی اے کے بعد نیب نے بھی پی سی بی میں کرپشن کے الزامات پرتحقیقات شروع کردی ہے۔پی سی بی حکام پر الزام ہے کہ انہوں نے قذافی اسٹیڈیم میں لگائی گئی بائیومکینیکل لیب میں خردبردکیا ہے۔نیب لاہور کے ڈائریکٹرجنرل(ر)میجر برہان علی نے صحافیوں سے بات چیت میں بتایا ہے کہ نیب نے اس حوالے سے اپنی تحقیقات کا آغاز کردیاہے۔واضح رہے کہ بائیومکینیکل لیبارٹری کیلئے مشینیں 2008 میں خریدی گئی تھیں ۔واضح رہے کہ نیب سے قبل ایف آئی اے بھی اس معاملے سے تحقیقات کررہی ہے جو اس معاملے کے علاوہ گڑھی خدابخش میں اسٹیڈیم کی تعمیر،ملتان کرکٹ اکیڈمی اور قذافی اسٹیڈیم کے فاراینڈپویلین کی تعمیرمیں بھی خردبردکی بھی جانچ پڑتال کررہی ہے۔ذرائع کے مطابق پی سی بی کے چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد اور چیف فنانشل آفیسر بدرمنظور ایف آئی اے میں اپنے بیانات ریکارڈکراچکے ہیں جبکہ وہ متعدد بارپیش بھی ہوچکے ہیں۔نیب لاہورکے ڈائریکٹر نے بتایا کہ پاکستان ہاکی فیڈریشن میں بھی ہونے والی گھپلوں کی تحقیقات ہورہی ہیں تاہم اس حوالے سے فی الوقت مزید کچھ بتایا نہیں جاسکتا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی