جماعت اسلامی ایک معاہدے کے تحتحکومت میں شامل ہوئی

جماعت اسلامی ایک معاہدے کے تحتحکومت میں شامل ہوئی

کرک(بیورورپورٹ) خیبرپختونخوا کے وزیرزکوٰۃ حاجی حبیب الرحمان نے کہا ہے کہ جماعت اسلامی ایک معاہدے کے تحت صوبائی حکومت میں شامل ہوئی ہے ،تحریک انصاف کی تمام پالیسیوں سے ہم متفق نہیں ،اسمبلی پلیٹ فارم پر اپنے منشورکی جنگ مؤثراندازمیں لڑرہے ہیں ان خیالات کا اظہارانہوں نے مادرپلازہ کرک میں جماعت اسلامی کے زیراہتمام مشاورتی کونسل کے غیرمعمولی اجلا س خطاب کرتے ہوئے کیا ،اپنی نوعیت کی اس منفرد پروگرام میں سابق صوبائی وزیرحافظ حشمت خان ،سابق صوبائی وزیرخزانہ شاہ راز خان ،سابق ایم این اے بختیارمعانی ،جماعت اسلامی ضلع کرک کے امیرمولاناتسلیم اقبال ،جنرل سیکرٹری محمد ظہور،نائب امیرضلع اعظم ہمایون اورپارٹی کے دیگرقائدین موجودتھے ،اجلا س میں ضلع کرک کی سینکڑوں اہم شخصیات ،معاشرے میں فعال رول اداکرنے والے سماجی افراد اورعوامی نمائندے شریک ہوئے ،جماعت اسلامی شعبہ تعلقات عامہ کے صوبائی قائدین نے پارٹی کا منشوراجلاس میں پیش کرتے ہوئے شرکاء سے تجاویزطلب کرکے پارٹی کی پالیسیوں پراپنانقطہ نظردینے کی دعوت دی ،ڈسٹرکٹ کونسلرملک حیات سمیت متعدداہم شخصیات نے مشاورتی اجلاس میں تجاویزپیش کرتے ہوئے جماعت اسلامی کیلئے نیک خواہشات کا اظہارکیا ،صوبائی وزیرحاجی حبیب الرحمان ،سابق ایم این اے بختیارمعانی ،سابق صوبائی وزراء حافظ حشمت اورشاہ راز خان نے اجلاس کے شرکاء کو یقین دلایا کہ جماعت اسلامی ملکی سیاست میں مثبت رول اداکرے گی،انہوں نے کہا کہ جنرل الیکشن 2018کے بعد جماعت اسلامی خیبرپختونخوا میں حکومت بنائے گی اورہم صوبہ کے دیگراضلا ع کی طرح کرک کے مسائل بھی ترجیحی بنیادوں پر حل کرینگے

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر