سانس بحال کرنے کی تکنیک کے موجد کی سانسیں بند ہوگئیں

سانس بحال کرنے کی تکنیک کے موجد کی سانسیں بند ہوگئیں

نیویارک (ویب ڈیسک) گلے میں کھانا پھنس جانے کے سبب بند سانس کو بحال کرنے لئے استعمال ہونے والی تکنیک کے موجد امریکی ڈاکٹر ہنری ہیملچ 96 برس کی عمر میں انتقال کر گئے۔ ڈاکٹر ہیملچ کے خاندان کا کہنا ہے دل کا دورہ پڑنے کے بعد ہونے والی پچیدگیوں کے سبب انکا انتقال ہوا۔ انھوں نے 1974ء میں زندگی بچانے کی تکنیک متعارف کروائی تھی۔جس میں سانس کی نالی میں موجود رکاوٹ ختم کرنے کے لیے پیٹ پر زور سے دبایا جاتا ہے۔

سانس بحال کرنے کی یہ تکنیک ہی ان کی واحد کامیابی نہیں تھی۔ 1962ء میں انھوں نے چھاتی سے مواد نکالنے کے لیے جھلی بنائی تھی، جس سے ویتنام کی جنگ میں متاثر ہونے والی کئی فوجیوں کی زندگیاں بچائی گئی تھیں۔ چھاتی کی سرجری کے دوران اب بھی اس چیسٹ ڈرین ویول کا استعمال ہوتا ہے۔

مزید : بین الاقوامی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...