خواجہ سراؤں کو مردم شماری میں شامل نہ کرنے پر حکومت سے جواب طلب

خواجہ سراؤں کو مردم شماری میں شامل نہ کرنے پر حکومت سے جواب طلب
خواجہ سراؤں کو مردم شماری میں شامل نہ کرنے پر حکومت سے جواب طلب

 لاہور(ویب ڈیسک) لاہور ہائی کورٹ نے خواجہ سراؤں کو مردم شماری میں شامل نہ کرنے کیخلاف دائر درخواست پر وفاقی حکومت سے 9 جنوری تک جواب طلب کرلیا۔ پیر کو چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ سید منصور علی شاہ نے شیراز ذکاء ایڈووکیٹ کی دائر درخواست پر سماعت کی۔ درخواست گزار کے وکلا  نے عدالت کو بتایا کہ خواجہ سراؤں کو شناختی کارڈ میں الگ شناخت دی جاتی ہے اورحکومت نے مارچ میں مردم شماری کرانے کا نوٹیفکیشن جاری کیا ہے،مگر اس مردم شماری میں خواجہ سراؤں کو شامل نہیں کیا جا رہا۔ان کا موقف تھا کہ مردم شماری میں خواجہ سراؤں کو نظرانداز کرنا آئین کی خلاف ورزی ہےلہذاانہیں مردم شماری میں شامل کرنے کا حکم دیا جائے۔عدالت نے دلائل سننے کے بعد وفاقی حکومت سے9 جنوری کو جواب طلب کر لیا۔

مزید : لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...