کوئٹہ، چرچ پر حملے کے خلاف بلوچستان بھر میں وکلاء کاعدالتوں کا بائیکاٹ

کوئٹہ، چرچ پر حملے کے خلاف بلوچستان بھر میں وکلاء کاعدالتوں کا بائیکاٹ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کوئٹہ(آن لائن)کوئٹہ میں میتھوڈسٹ چرچ پر حملے کے خلاف کوئٹہ سمیت بلوچستان بھر کے عدالتوں میں وکلاء نے بائیکاٹ کیا جس کے باعث پیشی پر آنیوالے سائلین کو مشکلات کا سامنا کر ناپڑا ۔ زرغون روڈ پر واقع میتھو ڈسٹ چرچ پر حملے کے خلاف کوئٹہ سمیت بلوچستان بھر کے عدالتوں میں وکلاء نے عدالتی کا رروائی کا بائیکاٹ کیاْ کوئٹہ میں میتھو ڈسٹ چرچ پر حملے کے بعد شہر میں فضا سو گوار رہی اور ٹریفک معمول سے کم چلتی رہی چرچ پر حملے کے بعد زرغون روڈ کو ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند رکھا گیا تھا جس کے باعث شہریوں کو شدید مشکلا ت کا سامنا کرنا پڑابلوچستان متحدہ محاذ نے چرچ پر حملے کے خلاف کوئٹہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے حکومت کے خلاف شدید نعرہ بازی کی اور مطالبہ کیا کہ حکومت عوام کو تحفظ دینے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکے ہیں اس لئے اخلاقی طور پر مستعفی ہو جائے بلوچستان متحدہ محاذ نے پیر کے روز کوئٹہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے مسیحی برادری کیساتھ اظہار یکجہتی کی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے متحدہ محاز کے وائس چیئرمین شمس مینگل ودیگر نے کہا کہ چرچ پر جس طرح دہشت گردوں نے حملہ کیا ہے یہ انتہائی بزدلانہ حملہ ہے اور اس واقعہ کی ہم شدید الفاظ میں مذمت کر تے ہیں یہ چرچ پر نہیں بلکہ پورے بلوچستان وپاکستان پر حملہ ہے ۔
وکلا بائیکاٹ

مزید :

علاقائی -