جدید ٹیکنالوجی ملکی ترقی میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے، ڈاکٹر فضل احمد

جدید ٹیکنالوجی ملکی ترقی میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے، ڈاکٹر فضل احمد

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(خصوصی رپورٹ ) جدید ٹیکنالوجی کسی بھی ملک کی سماجی و اقتصادی ترقی میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے اس سلسلے میں حکومت بہت سے منصوبوں کے ذریعے اعلیٰ اور تکنیکی تعلیم کی مضبوطی کے لیے خاطر خواہ اقدامات کر رہی ہے۔ یہ بات وائس چانسلر یونیورسٹی آف انجنیئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہور پروفیسر ڈاکٹر فضل احمد خالد نے الخوارزمی انسٹییٹو ٹ آف کمپیوٹر سائنسز یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہور کے زیر اہتمام تین روزہ آئی ٹرپل ای بین الاقوامی کانفرنس برائے اوپن سورس سسمٹز اور ٹیکنالوجیزکی افتتاحی تقریب میں ملکی اور غیر ملکی شرکاء سے خطاب میں کہی۔ انہوں نے کہا کہ تحقیق پر منصوبہ بندی ہمیشہ دیرپا حکمت عملی کے لیے نہ صرف کار گر ثابت ہوتی ہے بلکہ نمایاں کارکردگی دکھانے کا موقع بھی فراہم کرتی ہے اس امر میں جامعات کو چا ہئے کہ ترقی کے حصول کے لیے مؤثر کردار ادا کریں۔ڈائریکٹر الخوارزمی انسٹیٹوٹ آف کمپیوٹر سائنسزاینڈ ٹیکنالوجی پروفیسر ڈاکٹر وقار محمود نے کانفرنس کے مقاصد اور اہمیت سے آگاہی فراہم کرتے ہوئے کہا کہ ملکی معیشت کو انفرادی سطح پر آگے بڑھنے کے لیے تعلیمی و تکنیکی مہارتوں کے ذریعے مضبوط کیا جا سکتا ہے اس لیے ٹیکنالوجی میں جدت لانے کے لیے اقدامات کرنا ہوں گے۔کیونکہ اوپن سورس سسٹمز کمپیوٹر کی دنیا میں انقلاب برپا کر رہا ہے بلکہ سرکاری و غیر سرکاری اداروں کیلئے مناسب قیمت پر جدید ٹیکنالوجی سے مستفیذ ہونے کے لیئے کافی تیزی سے جگہ بنا رہا ہے۔یاد رہے کہ کانفرنس کیلئے دو سو کے قریب قومی اور بین الاقوامی جن میں تیرہ(13) ممالک امریکہ ،برطانیہ ، آسٹریلیا، جرمنی،جاپان ،رومانیہ، کینیڈا، بھارت،ملائیشیا، متحدہ عرب امارات ،سعودی عرب اور اٹلی سے تحقیقی پرچے وصول ہوئے اور 27اعلیٰ معیار کے تحقیقی پرچہ جات کو کانفرنس میں پیش کرنے کے منتخب کیا گیا۔ کانفرنس کی بین الاقوامی اور آئی ٹی انڈسٹری کی نامور شخصیات تکنیکی نشستوں میں نمائندگی کررہی ہیں۔ تقریب کے اختتام پرمہمانوں ، شیلڈز دی گئیں۔
ڈاکٹر فضل احمد

مزید :

علاقائی -