مریم نوازسمیت ن لیگی رہنماؤں کی عدلیہ مخالف تقاریر نشر کرنے پر پابندی کیلئے درخواست پر وفاقی حکومت و پیمرا کو نوٹس

مریم نوازسمیت ن لیگی رہنماؤں کی عدلیہ مخالف تقاریر نشر کرنے پر پابندی کیلئے ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے سابق وزیر اعظم میاں محمدنواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز سمیت مسلم لیگ (ن)کے راہنماؤں کی عدلیہ مخالف تقاریر نشر کرنے پرپابندی کے لئے دائردرخواست پر وفاقی حکومت اور پیمرا کو نوٹس جاری کر تے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے۔مسٹر جسٹس شاہد کریم نے سول سوسائٹی کی رکن آمنہ ملک کی درخواست پر سماعت کی جس میں مریم نواز سمیت مسلم لیگ (ن)کے راہنماؤں دانیال عزیز، مریم اورنگ زیب اور مخدوم جاوید ہاشمی اور دیگر راہنماؤں کی تقاریر پر اعتراض اٹھایا گیا اور ان تقاریر کو توہین آمیز قرار دیا گیا، درخواست گزار کے وکیل اظہر صدیق کے مطابق مریم نواز نے اپنے حالیہ ٹویٹ میں تو حد کر دی ہے، عدلیہ مخالف تقاریر توہین عدالت کے مترادف ہیں جو ایک قابل دست اندازی جرم ہے، عدلیہ مخالف تقاریر میڈیا پر نشر کی جارہی ہیں لیکن پیمرا خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہا ہے ۔
پیمرا کو نوٹس

مزید :

علاقائی -