ایسی تحریکیں جمہوریت ، ریاست و قوم کیلئے خطرناک ، آئندہ انتخابات کا امکان نظر نہیں آرہا

ایسی تحریکیں جمہوریت ، ریاست و قوم کیلئے خطرناک ، آئندہ انتخابات کا امکان ...
 ایسی تحریکیں جمہوریت ، ریاست و قوم کیلئے خطرناک ، آئندہ انتخابات کا امکان نظر نہیں آرہا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ممتاز کالم نگار سینئر صحافی اور خبریں گروپ آف نیوز پیپرز چیف ایگزیکٹو ضیاء شاہد نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے سربراہ نوازشریف اور تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی طرف سے سپریم کورٹ کے حق اور مخالفت میں تحریکیں شروع کی گئیں اور ان تحریکوں کی وجہ سے گلی گلی حالات محاذ آرائی تک چلے گئے تو آئندہ انتخابات کا امکان نظر نہیں آرہا ایسا ہوا تو یہ جمہوریت ،ریاست اور قوم تینوں کے لئے خطرناک ثابت ہو سکتا ہے وہ پاکستان کے مقبول عام سلسلہ ایشو آف دی ڈے میں گفتگو کر رہے تھے ضیاء شاہد نے کہا کے نوازشریف نے سپریم کورٹ کے فیصلوں کے خلاف اور عمران خان نے عدالتی فیصلوں کے حق میں تحریکیں چلانے کا اعلان کیا ہے اس میں سب سے زیادہ خطرناک بات یہ ہے کے بڑے شہروں سے دونوں اطراف سے شروع کی گئی تحریکیں شہروں کے بعد قصبوں اور پھر گلی محلوں تک پھیل جائیں گی اور ایک محاذ آرائی کی کیفیت اختیار کر جائیں گی جس سے انارکی پھیل سکتی ہے اور عموما ہوتا یہ ہے کہ اس پر قابو پانے کے لئے پولیس کو بلایا جاتا ہے اور پولیس کی ناکامی کی صورت میں رینجرز اور پھر آئین پاکستان کی روح سے افوج پاکستان کو اور خدانا خواستہ ایسی صورت میں تینوں ادارے اور عوام آمنے سامنے آجاتے ہیں تو ایسی صورت میں حالات خراب ہونے کیوجہ سے آئندہ الیکشن کا انعقاد خطرے میں پڑ سکتا ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ دونوں جماعتیں قانون اور آئین کی دائرہ میں رہیں اور کوئی ایسا اقدام نہ کریں جس سے خطرناک نتائج نکلنے کا خطرہ ہو ۔
ضیاء شاہد

مزید :

صفحہ اول -