باراک اوبامہ سے انٹر ویو کے دوران شہزادہ ہیری پریشانی سے دوچار

باراک اوبامہ سے انٹر ویو کے دوران شہزادہ ہیری پریشانی سے دوچار
 باراک اوبامہ سے انٹر ویو کے دوران شہزادہ ہیری پریشانی سے دوچار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی ریڈیو کے لیے شہزادہ ہیری ریڈیو میزبان بنے اور انہوں نے سابق امریکی صدر باراک اوباما کا انٹرویو کیا۔انٹرویو سے قبل دونوں میں ہلکی ہوئی پھلکی گفتگو اور نوک جھونک بھی ہوئی۔سی این این کی ایک رپورٹ کے مطابق رواں برس ستمبر میں انوکٹس گیمز کے دوران کینیڈا کے شہر ٹورنٹو میں ریکارڈ کیا گیا یہ انٹرویو رواں ماہ 27 دسمبر کو نشر کیا جائے گا۔گذشتہ روز اس کا ٹیزر جاری کیا گیا، جس میں سابق امریکی صدر کا انٹرویو لیتے وقت باراک اوباما تو پْر اعتماد نظر آئے لیکن شہزادہ ہیری کچھ نروس معلوم ہوئے۔پرنس ہیری نے اوباما کو مخاطب کرکے اعتراف کیا، 'آپ اس انٹرویو کے حوالے سے پرجوش ہیں اور میں نروس ہوں اور یہ بہت دلچسپ بات ہے'۔جس پر اوباما نے کہا، 'اگر آپ چاہیں تو میں آپ کا انٹرویو لے لوں گا'۔انٹرویو سے قبل ہلکی ہوئی پھلکی گفتگو اور چھیڑ چھاڑ بھی ہوئی، جب شہزادہ ہیری نے سابق امریکی صدر سے کہا کہ 'اگر جواب دینے میں تاخیر کی تو ان کا لٹکا ہوا منہ دیکھنا پڑے گا'۔جس پر باراک اوباما نے کہا کہ 'میں شہزادہ ہیری کی روتی بسورتی صورت ہرگز نہیں دیکھنا چاہتا'۔شاہی محل کنسنگٹن پیلس نے بھی اس حوالے سے ٹوئیٹ کی اور لکھا کہ یہ انٹرویو سابق صدر کے دفتر میں آخری دن اور صدارت سے ہٹ کر زندگی سے متعلق ان کے منصوبوں خاص کر اوباما فاؤنڈیشن کے گرد گھومتا ہے۔
شہزادہ ہیری

مزید :

صفحہ اول -