خیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی کے پارلیمانی انتخابات،اتحاد پارٹی نے میدان مارلیا

خیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی کے پارلیمانی انتخابات،اتحاد پارٹی نے میدان ...

  



ڈیرہ اسماعیل خان(بیورورپورٹ) خیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی کے پارلیمانی انتخابات مکمل، اتحاد پارٹی سے تعلق رکھنے والے ممبرخیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی معوز آرائیں نے ووٹ کاسٹ کیا، اتحاد پارٹی کے تینوں امیدواروں نے تمام نشستوں پر میدان مارلیا۔اپوزیشن لیڈر کی نشست کو خدمت پارٹی نے اپنے نام کرلیاجبکہ جذبہ پارٹی تیسرے نمبر کیساتھ اپوزیشن کی دوسری بڑی پارٹی کی حیثیت سے سامنے آئی۔الیکشن کمیشن آف KPYAکے آفیشل رزلٹس کے مطابق اتحاد پارٹی سے اسامہ احمدخان نے 87ووٹوں کیساتھ وزیراعلی کی نشست کو اپنے نام کرلیا۔جبکہ مدمقابل امیدواروں میں خدمت پارٹی سے تنویر احمد نے دوسری پوزیشن حاصل کی اور 62ووٹوں کے ساتھ اپوزیشن لیڈر کی نشست کو اپنے نام کی جبکہ جزبہ پارٹی کے امیدوار توصیف خان نے 20ووٹوں کیساتھ تیسری نمبر پر رہے۔اسی طرح اتحاد پارٹی سے اسدخان141ووٹ لے کر دوبارا اسپیکر منتخب ہوئے،مدمقابل امیدواروں میں جزبہ پارٹی سے سید عاصم شاہ نے دوسری پوزیشن 19ووٹ حاصل کی جبکہ خدمت پارٹی سے محمد طیب نے 9ووٹ حاصل کئے۔ڈپٹی اسپیکر کی نشست پر اتحاد پارٹی نے یوتھ اسمبلی کی پہلی خاتون امیدوار فائقہ فلک ناز کو میدان میں اتارا جنہوں نے 86ووٹوں کیساتھ یوتھ اسمبلی کے تاریخ کی پہلی خاتون ڈپٹی اسپیکر ہونے کا اعزاز اپنے نام کرلیا۔مدمقابل امیدوارں میں خدمت پارٹی سے احمد ولی نے 55ووٹوں کیساتھ دوسری پوزیشن حاصل کی جبکہ جذبہ پارٹی سے کاشف خان نے تیسری پوزیشن لیتے ہوے 27ووٹ حاصل کیئے۔اس موقع پر ممبر خیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی معوز آرائیں کا کہنا تھا الحمداللہ اتحاد پارٹی ہاؤس کی مضبوط ترین جماعت بن کر سامنے آئی ہے ہماری پارٹی نے تینوں عہدوں پر کامیابی حاصل کی ہے انشا اللہ نوجوانوں کے مسئلہ کے حل کیلئے عملی جدوجہد کریں گے

مزید : پشاورصفحہ آخر