یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہورکا26 واں کانووکیشن

یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہورکا26 واں کانووکیشن

  



گزشہ بدھ یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہورکا26ویں کانووکیشن کا انعقاد کیا گیا۔ جس کے مہمان خصوصی گورنرپنجاب/ چانسلر چوہدری محمد سرور تھے۔ یو ای ٹی کے پرشکوہ آڈیٹوریم میں منعقدہ کانووکیشن میں سات مختلف کلیات کے کل طلبہ وطالبات میں ڈگریاں تقسیم کی گئیں۔ جن میں 2232 گریجوایٹس،24پی ایچ ڈیز جبکہ 66طلباء و طالبات میں گولڈ میڈل تقسیم کر دئیے گئے۔ کانووکیشن میں اسناد وصول کرنے والوں میں یوای ٹی کالا شاہ کاکو، فیصل آباد، گوجرنوالہ اور نارروال کیمپس کے طلبہ وطالبات کی بڑی تعدادبھی شامل تھی۔جلسہ عطائے اسنا د سے مہمان خصوصی گورنر پنجاب/ چانسلر چوہدری محمد سرور نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قومیں یقین اور اتحاد سے پروان چڑھتی ہیں اور کسی بھی ملک کی ترقی میں نوجوان نسل اہم کردار اد کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ان خوش نصیب ممالک میں اولین حیثیت رکھتا ہے کہ یہاں کی 60فیصد آباد ی نوجوانوں پر مشتمل ہے۔انہوں نے کہا کہ آج کے جدید دور میں فنی تعلیم نہایت اہمیت کی حامل ہے۔ انہوں نے کہا کہ جن قوموں نے تحقیقی اور ایجادات پر توجہ دی وہ آج دنیا پر حکمرانی کررہی ہیں۔گورنر نے نوجوان انجینئرز پر زور دیتے ہوئے کہا کہ وطن عزیز کو ترقی یافتہ ممالک کی صف میں شامل کرنے کے لئے تحقیقی اور ریسرچ پر توجہ دیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی ترقی و خوشحالی میں انجینئرز رول ماڈل اور ہراول دستہ کی حیثیت رکھتے ہیں۔ گورنر پنجاب نے کہا کہ حکومت میرٹ کی بالادستی پر یقین رکھتی ہے اور اِس پر عمل درآمد کو ہر صورت ممکن بنایا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ یونیورسٹیوں کو مالی اور انتظامی لحاظ سے بااختیار بنایا جائے گا۔ گورنر پنجاب نے اسناد حاصل کرنے والے طلبا و طالبات سے کہا کہ آپ کی زندگی میں یہ لمحات سنگ میل کی حیثیت رکھتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہ محنت، لگن، دیانتداری کو اپنا شعار بنائیں اور اپنے ادارے اور ملک کا نام روشن کریں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے تعلیم کے معیار کو بہتر بنانے کے لئے جامع اقدامات کئے جارہے ہیں۔انہوں نے طلبا پر زور دیا کہ وہ والدین اور اساتذہ کی عزت کریں کیونکہ آج وہ والدین کی دعاں اور اساتذہ کی محنت کی وجہ سے اِس مقام پر پہنچیں ہیں۔

٭٭٭

مزید : ایڈیشن 1