پرویز مشرف کو سنائی جانیوالی سزا قابل قبول نہیں، فنکار برادری

      پرویز مشرف کو سنائی جانیوالی سزا قابل قبول نہیں، فنکار برادری

  



لاہور(فلم رپورٹر)سابق صدر اور آرمی چیف جنرل (ر)پرویز مشرف کو سنگین غداری کیس میں خصوصی عدالت کی جانب سے سزائے موت سنائے جانے کے فیصلے پر جہاں سوشل میڈیا پر بحث جاری رہی وہیں شوبز کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات نے بھی اپنا ردعمل ظاہر کیا ہے اداکار شان نے سابق صدر پرویز مشرف کے فیصلے پر ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا ایک افسوسناک دن جب ایک محب وطن کو غدار قرار دیا گیا۔ پرویزمشرف سر آپ ہمیشہ ہمارے لئے محب وطن ہیں۔ ایک سچا پاکستانی، ایک بہادر سپاہی اور اس مٹی کا بیٹا۔ اس کے ساتھ ہی اداکار شان نے پاک آرمی زندہ باد کا ہیش ٹیگ استعمال کیا۔حمزہ علی عباسی نے بھی پرویز مشرف فیصلے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا پرویز مشرف کیس کا فیصلہ آنے کے بعد کیا اب پاکستان مسلم لیگ (ن) اور وہ تمام دانشور جنہوں نے نواز شریف کا فیصلہ آنے کے بعد عدالتوں پر اسٹیبلشمنٹ کی کٹھ پتلی ہونے کا الزام لگایا تھا اب معافی مانگیں گے؟اداکارہ مہوش حیات نے پرویز مشرف کیس کے فیصلے پر ایک آئرش سپاہی کا قول ٹوئٹ کیا جس کا مفہوم یہ ہے”مجھے جس جرم میں غدارٹھہرایا گیا ہے، اسے میں نے ایک مقدس فریضہ کے طور پر سرانجام دیا تھا، اور اسے ایک قربانی کے طور پر یاد رکھا جائے گا۔“ شاہد حمید،معمر رانا،مسعود بٹ،حسن عسکری،شان،سید نور،میلوڈی کوئین آف ایشیاء پرائڈ آف پرفارمنس شاہدہ منی،صائمہ نور،میگھا،ماہ نور،انیس حیدر،ہانی بلوچ،یار محمد شمسی صابری،سہراب افگن،ظفر اقبال نیویارکر،عذرا آفتاب،حنا ملک،انعام خان،فانی جان،عینی طاہرہ،عائشہ جاوید،میاں راشد فرزند،سدرہ نور،نادیہ علی،شین،سائرہ نسیم،صبا ء کاظمی،،سٹار میکر جرار رضوی،آغا حیدر،دردانہ رحمان،ظفر عباس کھچی،سٹار میکر جرار رضوی،ملک طارق،مجید ارائیں،گلفام،طالب حسین،قیصر ثنا ء اللہ خان،مایا سونو خان،عباس باجوہ،مختار چن،آشا چوہدری،اسد مکھڑا،وقا ص قیدو، ارشدچوہدری،چنگیز اعوان،حسن مراد،حاجی عبد الرزاق،حسن ملک،عتیق الرحمن،ریما خان،اشعر اصغرتبسم،،آغا عباس،صائمہ نور،خرم شیراز ریاض،خالد معین بٹ،اور نجیبہ بی جی نے بھی ملے جلے رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارے ملک میں بیرونی سے زیادہ اندرونی سازشیں ہیں جن کی وجہ سے ملک کی سالمیت کو نقصان پہنچ رہا ہے۔جنرل (ر)پرویز مشرف کو سنائی جانے والی سزا کسی طور پر بھی قابل قبول نہیں ہے۔اس فیصلے نے پاکستان کے دشمنوں کو خوش ہونے کا موقع دیا ہے۔کچھ فنکاروں کا کہنا تھا کہ اس بات پر خاموشی بہتر ہے کیونکہ ہمیں اس کیس کے بارے میں کوئی زیادہ علم نہیں ہے۔ہماری تو ایک ہی دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ ہمارے ملک کو سلامت رکھے۔

مزید : کلچر