لاہور کی خاتون کی کہانی جو اپنے بچوں کا پیٹ پالنے کے لئے مرد کا بھیس دھار کر زندگی گزار رہی ہے

لاہور کی خاتون کی کہانی جو اپنے بچوں کا پیٹ پالنے کے لئے مرد کا بھیس دھار کر ...
لاہور کی خاتون کی کہانی جو اپنے بچوں کا پیٹ پالنے کے لئے مرد کا بھیس دھار کر زندگی گزار رہی ہے

  



لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) لاہور میں ایک خاتون اپنی بچی کا پیٹ پالنے اور اسے تعلیم دلانے کے لیے مرد بن گئی۔ ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ کے مطابق اس خاتون کی کہانی فیس بک پیج ہیومنز آف لاہور پر پوسٹ کی گئی ہے۔اس خاتون کا نام فرحین ہے جس نے مردانہ روپ دھار رکھا ہے اور انارکلی میں ایک دکان چلاتی ہے۔فیس بک پوسٹ میں خاتون بتاتی ہے کہ ”میرا نام فرحین ہے۔ میں گزشتہ 8سال سے لاہور میں مقیم ہوں۔ میری ایک 9سال کی بیٹی بھی ہے اور ہم ماں بیٹی ایک ہاسٹل میں رہتی ہیں۔ ہم دونوں انارکلی بازار میں ایک دکان چلاتی ہیں لیکن تنگی حالات کی وجہ سے دکان بالکل خالی ہو چکی ہے۔ میں اوبر ٹیکسی بھی چلاتی ہوں لیکن مالی حالات جوں کے توں ہیں۔“

فرحین مزید کہتی ہے کہ ”مجھے کسی سے کوئی رقم نہیں چاہیے تاہم بدقسمتی سے مجھے ان دنوں مدد کی بہت ضرورت ہے۔ میں چاہتی ہوں کہ لوگ پیسوں کی بجائے جنرل سٹورکا سامان کولڈ ڈرنکس، سگریٹ، ٹافیاں، بسکٹس وغیرہ کے ذریعے میری مدد کر دیں تاکہ میں اس سامان کو اپنی دکان پر فروخت کرکے حلال روزی کما سکوں۔ میری دکان کا نام علی جنرل سٹور ہے جو انارکلی بازار کے علی پلازہ میں مکی چائے والا کے قریب واقع ہے۔“ اپنے مردانہ حلیے کے بارے میں فرحین کا کہنا تھا کہ ”اگر میں مردانہ حلیہ نہ بناتی تو میرے لیے بازار میں کام کرنا بہت مشکل ہو جاتا۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...