’پاک فوج ادارہ نہیں خاندان ہے، اندرونی و بیرونی دشمنوں کو بھرپور جواب دیں گے‘ ڈی جی آئی ایس پی آر نے واضح اعلان کردیا

’پاک فوج ادارہ نہیں خاندان ہے، اندرونی و بیرونی دشمنوں کو بھرپور جواب دیں ...
’پاک فوج ادارہ نہیں خاندان ہے، اندرونی و بیرونی دشمنوں کو بھرپور جواب دیں گے‘ ڈی جی آئی ایس پی آر نے واضح اعلان کردیا

  



راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن) ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کا کہنا ہے کہ پاک فوج ایک ادارہ نہیں بلکہ ایک خاندان کی طرح ہے، ہم ادارے کے وقار اور ملک کا دفاع کرنا اچھی طرح جانتے ہیں ، اندرونی و بیرونی دشمنوں اور ان کے آلہ کاروں کو بھرپور جواب دیں گے۔

خصوصی عدالت کی جانب سے سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس کا تفصیلی فیصلہ جاری ہونے کے بعد پاک فوج کا رد عمل ظاہر کرنے کیلئے ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے پریس کانفرنس کی۔ اپنے خطاب میں ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ پاک فوج ایک ادارہ نہیں بلکہ ایک خاندان کی طرح ہے ، ہم ادارے کی عزت اور وقار کا دفاع بھی بہت اچھی طرح جانتے ہیں لیکن ہمارے لیے ملک پہلے ہے اور ادارہ بعد میں ہے۔ پاک فوج نے وہ کام کیا ہے جو کوئی اور فوج نہیں کرسکتی، ہم دشمن کے عزائم میں آکر ان چیزوں کو خراب نہیں ہونے دیں گے، ہم ملک اور ادارے کی عزت و وقار کا بھرپور دفاع کریں گے۔

انہوں نے واضح کیا کہ ہم ملک میں کسی صورت انتشار کو پھیلنے نہیں دیں گے، ہم ادارے کے وقار اور ملک کا دفاع کرنا اچھی طرح جانتے ہیں ، جتنے بھی دشمن ہیں خواہ وہ اندرونی ہیں یا بیرونی ، یا ان کے آلہ کار ہیں ان کو بھرپور جواب دیں گے۔

خیال رہے کہ خصوصی عدالت نے سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس کا تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ہے۔ فیصلے میں سابق صدر کو 5 بار سزائے موت کا حکم دیا گیا ہے اور لکھا گیا ہے کہ اگر ان کی سزا پر عملدرآمدسے پہلے موت واقع ہوجائے تو ان کی لاش کو گھسیٹ کر ڈی چوک لایا جائے اور 3 روز تک لٹکایا جائے۔

مزید : قومی /دفاع وطن