الیکشن کمیشن سندھ میں غیر قانونی بھرتیاں، 11ملازمین برطرف، 3جبری ریٹائرڈ

  الیکشن کمیشن سندھ میں غیر قانونی بھرتیاں، 11ملازمین برطرف، 3جبری ریٹائرڈ

  

 اسلام آباد(آن لائن) الیکشن کمیشن نے سندھ کے صوبائی دفتر میں خلاف ضابطہ بھرتیوں کی تحقیقات کے نتیجے میں 11ملازمین کو برطرف کر دیا جبکہ 3 کو جبری ریٹائرڈ کردیاہے۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے صوبائی دفتر سندھ، کراچی میں 2015 میں کی گئی بھرتیوں کے حوالے سے شکایات کی بنیاد پر الیکشن کمیشن کے گریڈ 20 کے افسر کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دی گئی جس نے مکمل جانچ پڑتال کے بعد اپنی رپورٹ مجاز افسران کو جمع کرا ئی۔ رپورٹ کی روشنی میں مجاز حکام نے کارروائی کرتے ہوئے جونئیر اسسٹنٹ شوکت علی، جونیئر پرسنل اسسٹنٹ شرجیل، جونیئر پرسنل اسسٹنٹ اسداللہ، جونیئر پرسنل اسسٹنٹ سید انس مجاہد،جونیئر پرسنل اسسٹنٹ وقاص احمد، جونیئر  پرسنل اسسٹنٹ محمد شعیب افتخار اور سنیئر اسسٹنٹ سید محمد رضی کو ملازمت سے برطرف کر دیا گیا ہے جبکہ جونیئر اسسٹنٹ محمد آصف، سنیئر اسسٹنٹ سید منیب علی،سینئر اسسٹنٹ قرآن خلیل، سنیئر اسسٹنٹ سید حارث محمود کو بھی ملازمت سے ہٹا دیا گیا ہے۔ جونیئر اسسٹنٹ مختار علی، سینئر اسسٹنٹ اللہ بخش راہڑاور اسسٹنٹ سید ضمیر حیدر کو جبری ریٹائر کیا گیا ہے۔ ڈائریکٹر آئی ٹی عبد القار، ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر تابندہ  خلیق اور سینئر پرسنل اسسٹنٹ سید سلمان کے خلاف کارروائی بھی آخری مراحل میں ہے۔ 

ملازمین برطرف

مزید :

صفحہ آخر -