ابن حسن کے سو گ میں آرٹس فورم نے انتخابی مہم معطل کر دی 

ابن حسن کے سو گ میں آرٹس فورم نے انتخابی مہم معطل کر دی 

  

  کراچی (اسٹاف رپورٹر)آرٹس کونسل آف پاکستان کراچی کے انتخاب میں خازن کے امیدوار سید ابن حسن کے انتقال پر دی آرٹس فورم پینل نے اپنی انتخابی مہم معطل کردی اور دی آرٹس فورم پینل کے،کے ایم سی اسپورٹس کمپلیکس میں منعقد ہونے والے اجلاس کو سید ابن حسن کے تعزیتی ریفرنس میں تبدیل کردیا گیا۔تعزیتی اجلاس کی صدارت نجم الدین شیخ نے کی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سینئر صحافی آغا مسعود حسین نے کہا کہ ابن حسن ایک ہمہ جہت شخصیت کے مالک تھے۔انہوں نے نہ صرف ایک قومی بینک کی بہترین ترجمانی کی بلکہ صحافی برادری میں بھی وہ بہترین دوست کے طور پر جانے جاتے تھے۔آرٹس کونسل میں سیکرٹری کے امیدوار مبشر میر نے کہا کہ سید ابن حسن انسان دوست اور ہمدرد شخصیت تھے۔وہ نہایت خاموشی سے سفید پوش طبقات کی مدد کیا کرتے تھے۔مصلحت خداوندی ہے کہ ان کے بچے ابھی چھوٹے ہیں اور خدا نے انہیں اپنے پاس بلالیا ہے۔سینئررکن محمد اسلم نے کہا کہ سید ابن حسن کی یاد کبھی دل سے نہیں بھلائی جاسکے گی اور ان کے انتقال سے ہونے والا خلا کبھی پرنہیں ہوسکے گا۔قندیل جعفری نے کہا کہ ابن حسن محبت کرنے والی شخصیت تھے اور سب سے ہی یکساں محبت کا اظہار کرتے تھے۔گورننگ باڈی کے امیدوار سید تحسیم الحق حقی نے کہا کہ ابن حسن کی یاد میں ایک میموریل کمیٹی کا قیام ضروری ہے تاکہ انہیں تادیر یاد رکھاجاسکے۔گورننگ باڈی کے امیدوار محمد نعیم طاہر نے کہا کہ سید ابن حسن صحافیوں کے ترجمان تھے۔صحافیوں میں ان کا اتنا احترام تھا کہ صحافیوں کے انتخابات میں وہ الیکشن کمشنرہوتے تھے۔ان کے فیصلے کو تمام صحافی مانتے تھے۔آصف مقصود نے کہا کہ سید ابن حسن کی موت ایک بڑا دھچکا ہے۔سینئر اداکار محمد ایوب نے کہا کہ ابن حسن مرنجاں مرنج شخصیت تھے۔تعزیتی اجلاس میں ابن حسن کی روح کے ایصال ثواب کے لیے فاتحہ خوانی کی گئی۔

مزید :

صفحہ آخر -