ہائی کورٹ ملتان بینچ، ایس ایس پی  انویسٹی گیشن کو درست تفتیش کی ہدایت

ہائی کورٹ ملتان بینچ، ایس ایس پی  انویسٹی گیشن کو درست تفتیش کی ہدایت

  

 ملتان (خصوصی رپورٹر) ہائیکورٹ ملتان بنچ کے جج مسٹر جسٹس چوہدری عبدالعزیز نے ایس ایس پی انویسٹی گیشن ملتان (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

ربنواز تلہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگر درست تفتیش نہیں کی گئی تو وہ سٹی پولیس آفیسر کو عدالت میں طلب کریں گے آگے۔ وہ اقدام قتل کے مقدمہ میں ملوث ملزم کی ضمانت کنفرم کرنے کی درخواست پر سماعت کر رہے تھے درخواست پر آئندہ سماعت جنوری کے دوسرے ہفتے میں ہوگی۔ عدالت عالیہ نے کہا کہ آپ تسلیم کرتے ہیں 10 سے 12 مسلح افراد پٹشنر کے گودام پر حملہ آور ہوئے اس میں سے جو شخص زخمی ہوا اس کے خلاف 25 26 سنگین مقدمات درج ہیں کیا پٹیشنر کو انتظار کرنا چاہیے تھا کہ مسلحہ افراد اس پر گولی چلا دیں۔پٹشنر کے وکیل سید مزمل حسن بخاری نے موقف اختیار کیا کہ قبضہ گروپ کا سرغنہ محمد آصف اپنے دس بارہ مسلح ساتھیوں کے ہمراہ ان کے موکل محمد عثمان نعیم کے گودام پر حملہ آور ہوا انہوں نے آتے ہی فائرنگ شروع کر دی ایک گوکی ان کے اپنے ساتھی کو لگی عثمان نعیم نے کوئی فائر نہیں کیا مگر پولیس نے پٹیشنر کے خلاف اقدام قتل کا مقدمہ درج کیا پولیس حقائق سے بخوبی واقف ہونے کے باوجود مکل کو پریشان کر رہی ہے وہ عبوری ضمانت حاصل کر چکا عدالت سے استدعا ہے کہ عبوری ضمانت کنفرم کرنے کا حکم دیا جائے۔

ہدایت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -