کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی نے تین سال سے لاپتہ بیٹے کو والدین سے ملوادیا

کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی نے تین سال سے لاپتہ بیٹے کو والدین سے ملوادیا
کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی نے تین سال سے لاپتہ بیٹے کو والدین سے ملوادیا

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست تلنگانہ میں کورونا ایس پیز کی خلاف ورزی پر چالان کی وجہ سے اہل خانہ کو تین سال بعد لاپتہ بیٹا مل گیا، ملاقات کے موقع پر گھر والے فرط جذبات سے روپڑے۔

اے آر وائی نیوزکے مطابق ستیش نامی شخص سافٹ ویر انجنئیر ہے اور وہ ایم این سی میں کام کرتا تھا اور زندگی خوشحال گزر رہی تھی۔تین سال قبل ستیش ملازمت چھوڑ کر کاشت کاری کرنا چاہتا تھا۔مگر والدین نے اجازت دینے سے انکار کردیاجس پر ستیش ناراض ہوکر گھر سے چلا گیا اور تلاش کے باوجود اسکا کوئی سراغ نہ مل سکا۔

کچھ عرصہ قبل  موٹر سائیکل سوار ستیش ماسک اور ہیلمیٹ پہنے بغیر گزررہا تھا کہ ماسک نہ پہننے پر اس کا چالان ہوگیا اور  اس کی تصویر کھینچ لی گئی جسے پولیس کے اسے ٹی ایس ٹکٹ ایپلی کیشن پر اپلوڈ کردیا گیا۔اسی دوران ستیش کے اہل خانہ نے ایک بار پھر پولیس سے رابطہ کیا تب پولیس نے ستیش کی موٹر سائیکل کا نمبر چیک کیا جس سے پتہ چلا کہ وہ ظہیرآباد میں ہی ہے۔ پولیس نے تھانے میں اس کے اہل خانہ کو بلا کر مذکورہ شخص کو چالان کے سلسلے میں پولیس اسٹیشن طلب کیا اور ان سے ملاقات کروائی۔اس موقع پر رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے ستیش کے اہل خانہ اسے دیکھ کر گلے لگ کر روپڑے اور پولیس کے تعاون پر اہلکاروں کا شکریہ ادا کیا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -